کوئلے وسیمنٹ کی ترسیل کیلئے ریلوے اور میپل لیف میں معاہدہ طے

کوئلے وسیمنٹ کی ترسیل کیلئے ریلوے اور میپل لیف میں معاہدہ طے

  

 لاہور ( سٹاف رپورٹر )پاکستان ریلویز اور میپل لیف سیمنٹ کے درمیان کوئلے اور سیمنٹ کی بذریعہ ٹرین ترسیل کے معاہدے پر دستخط ہوگئے ہیں۔ اس موقع پرچیئرپرسن ریلوے پروین آغا، جنرل مینیجر آپریشنزانجم پرویز،اے جی ایم ٹریفک جاوید انور بوبک اور میپل لیف سیمنٹ کے چیف ایگزیکٹوسعید سہگل بھی موجود تھے ۔وفاقی وزیر خواجہ سعد رفیق نے بتایا کہ معاہدے کے تحت میپل لیف ریلویز کو 65کروڑ روپے پیشگی ادا کررہاہے جس میں سے20کروڑ سکیورٹی ڈیپازٹ جبکہ بقیہ45کروڑ کرائے کی مد میں وصول کئے جارہے ہیں جو 8سے 9ماہ میںخرچ ہو ں گے جس کے بعد میپل لیف ریلو ے کو مزید ادائیگی کرے گا ۔ میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ہم فریٹ سیکٹر کو 80فیصد اور پسنجر سیکٹرمیں 20فیصد اضافہ کر کے فریٹ او رپسنجر میں بیلنس کو قائم کریں گے ،75نئے انجن خریدنے کا پہلا معاہدہ کرنے جارہے ہیں جن میں 45انجن 4000ہارس پاور سے زائد کے ہونگے،اس سلسلے میں امریکی اور چینی کمپنیوں نے بھی دلچسپی ظاہر کی ہے تاہم نئے انجن خریدتے وقت معیار پر کوئی سمجھوتہ نہیں کرینگے ،صرف سکہ بند ٹیکنالوجی لیں گے اور ان میں سے بعض انجن رسالپور فیکٹری میں بھی تیار کئے جائینگے تاکہ یہ فیکٹریاں بھی چل سکیںجبکہ 1320میگاواٹ صلاحیت کے ساہیوال کول پاور پلانٹ کے لئے کول ٹرانسپورٹیشن کا کام ہم 30ماہ میں شروع کریں گے ۔ایک سوال پر انہوں نے کہا کہ جو چینی انجن لئے ہیں انکے ڈیزان یزائن میں کوئی خرابی نہیں سافٹ ویر کا معمولی مسئلہ سامنے آیا تھا جس کو دور کرلیا گیا ہے اور عملے کو مزید تربیت دلوانے کے لئے چین سے مزید ماسٹر ٹرینرز منگوا لئے ہیں۔اس موقع پرجی ایم آپریشنزنے بتایا کہ میپل لیف سے طے پانے والے معاہدے کے تحت پہلی مرتبہ جو بھی فریق اس کو پورا کرنے میں ناکام رہے گا اسے دوسرے فریق کو جرمانہ ادا کرنا پڑے گا جس سے ریلوے میں کارپوریٹ کلچر کو فروغ دینے میں مدد ملے گی ۔میپل لیف کے سی ای او سعید سہگل نے کہا کہ میپل لیف ریلوے کے ساتھ کافی عرصہ سے کام کر رہی ہے لیکن کچھ عرصہ قبل حالت یہ تھی کہ ریلوے کے پاس کبھی فیول نہیں تو کبھی انجن نہیں لیکن ریلوے کی کارکردگی میں اضافے نے ہمیں اس کے ساتھ معاہدے پر مجبور کیا ہے اسی لئے ریلویز کیساتھ تین سالہ معاہدہ کیا ہے ۔

 معاہدہ

مزید :

علاقائی -