برما میں مسلمانوں پر مظالم کے خلاف مذمتی قرار داد سینیٹ میں متفقہ طور پر منظور

برما میں مسلمانوں پر مظالم کے خلاف مذمتی قرار داد سینیٹ میں متفقہ طور پر ...

  



اسلام آباد)اے این این) سینیٹ نے میانمار میں مسلمانوں پر ڈھائے جانے والے مظالم اوران کی نسل کشی کے خلاف قرارداد مذمت متفقہ طورپر منظورکرلی۔چیرمین سینیٹ رضا ربانی کی زیرصدارت اجلاس کے دوران سینیٹرمشاہد حسین سید نے میانمارمیں روہنگیا مسلمانوں کی نسل کشی کے خلاف مذمتی قرارداد پیش کی جسے ایوان نے متفقہ طورپر منظورکرلیا۔ قرارداد کے متن میں کہا گیا ہے کہ حکومت میانمار میں مسلمانوں پر ڈھائے جانے والے مظالم کو عالمی عدالت میں لے کر جائے اور اس مسئلے کو اقوام متحدہ اورعالمی برادری سے رابطہ کر کے اٹھایا جائے۔قرارداد میں کہا گیا ہے کہ حکومت فوری طور پر پارلیمانی وفد تشکیل دے اوراسے میانمارروانہ کیا جائے تاکہ روہنگیا مسلمانوں کی نسل کشی اور ان پر ڈھائے جانے والے مظالم کے حوالے سے میانمار حکام سے بات کی جاسکے۔واضح رہے کہ میانمار میں روہنگیا مسلمانوں کی نسل کشی کے باعث وہ ملک چھوڑ کر بذیعہ سمندر دیگر ممالک جانے پر مجبور ہیں۔

مزید : صفحہ اول


loading...