راوی روڈ، تیز رفتار ٹریکٹر نے محنت کش کی 8سالہ بیٹی کو کچل ڈالا، ڈرائیو فرار

راوی روڈ، تیز رفتار ٹریکٹر نے محنت کش کی 8سالہ بیٹی کو کچل ڈالا، ڈرائیو فرار

  



لاہور (کرائم سیل )راوی روڈ کے علاقہ میں محنت کش کی 8سالہ بیٹی کو تیز رفتار ٹریکٹر ٹرالی نے ٹائروں تلے کچل ڈالا،بچی موقع پر ہی دم توڑ گئی جبکہ ڈرائیورجائے حادثہ سے فرار ہو گیا جسے پولیس نے تعاقب کر کے گرفتار کر لیا ۔ متوفیہ کے باپ کی درخواست پر ڈرائیور کے خلاف مقدمہ درج کر لیا گیا۔ بچی کی ہلاکت کی خبر پہنچتے ہی گھر میں کہرام مچ گیا، بیٹی کی لاش سے ماں لپٹ کر روتی رہی، پو لیس نے لاش کو ضروری کارروائی کے بعد ورثا کے حوالے کر دیا ہے ۔ تفصیلات کے مطابق گوجرا نوالہ کا رہائشی اصغر فیکٹری میں ملازم ہے، بیوی اور بچوں کو گرمیوں کی چھٹیوں پر اپنے سسرال لے کر آیا ہوا تھا۔گزشتہ روزاس کی 8سالہ بیٹی آمنہ گھر کے قریب ہی واقع اپنے نانا کی دوکان پرگئی اوران سے پیسے لے کرایک دوکان سے کھانے کیلئے چیزیں خریدیں۔ گھر واپس جانے کیلئے جیسے ہی سڑک پر آئی ،سامنے سے آنے والی تیز رفتار ٹریکٹر ٹرالی کی زد میں آ گئی،بچی ٹریکٹر کے ٹائروں تلے آ کر بری طرح کچلی گئی اور موقع پر ہی دم توڑ گئی۔ لوگوں کے کہنے پر چوکی سبزی منڈی کے انچارج حبیب خان نے ٹریکٹر ٹرالی کے ڈرائیور کا تعاقب کیا اور اس کو گرفتار کر لیا۔ادھر بچی کی ہلا کت کی خبر سنتے ہی گھر میں کہرام مچ گیا۔ ماں لاش سے لپیٹ کر روتی رہی اور باپ بھی دھاڑیں مار کر روتا رہا۔ بچی کی ہلاکت کے بعد لوگوں کی بڑی تعدادنے مشتعل ہو کر ٹریفک بلاک کر دی جنہیں پولیس نے منتشر کر دیااور متوفیہ کے والد اصغر کی درخواست پر ملزم ڈرئیور کے خلاف مقد مہ درج کر لیا۔ بچی کی لاش کو ضروری کارروائی کے بعد ورثاء کے حوالے کر دیا گیا ہے۔ متوفیہ آمنہ کی دو بہنیں اور ایک بھائی ہے، وہ گھر میں سب سے چھوٹی تھی اور لاڈلی تھی ۔

مزید : علاقائی


loading...