پنجاب حکومت اور رمضان بازار

پنجاب حکومت اور رمضان بازار
 پنجاب حکومت اور رمضان بازار

  

رمضان المبارک کا بابرکت مہینہ شروع ہونے کے ساتھ ہی مسلمانوں میں نیکی کا جذبہ بھی پروان چڑھ چکا ہے ۔ مساجد نمازیوں سے بھر چکی ہیں، مگر ایک طبقہ جس پر رمضان میں تنقید کی جاتی ہے وہ ایسے دوکاندار ہیں، جو کہ ذخیرہ ا ندوزی کرتے ہیں ۔ اور جان بوجھ کر چیزوں کی قیمتیں بڑھاتے ہیں۔

اسی حقیقت کو مدنظر رکھتے ہو ئے خادم اعلیٰ پنجاب محمد شہباز شریف نے خصوصی طور پر اس بات پر توجہ دی ہے کہ رمضان المبارک میں گراں فروشی کرنے والوں سے سختی سے نمٹا جائے اور عوام کو سستی اور معیاری اشیاء اس بابرکت مہینہ میں دستیاب ہوں اور اسی مقصد کے لئے انہوں نے پانچ ارب روپے کی سبسڈی دی ہے۔ اشیائے صرف کی مقررہ نرخوں پر فراہمی کے لئے 1756 پرائس کنٹرول کمیٹیاں بنا کر ان میں مجسٹریٹس کو تعینات کیا گیا ہے، جبکہ وزیراعلیٰ کی ہدایت پر مخیر حضرات کے ساتھ مل کر 2000مدنی دستر خوان لگائے گئے ہیں ۔ میاں صاحب چونکہ خود لاہور سے جذباتی وابستگی رکھتے ہیں۔ اِس لئے لا ہور میں خصوصی انتظامات دیکھنے میں آ رہے ہیں ۔لاہور کے 9ٹاؤنز سمن آباد ٹاؤن، اقبال ٹاؤن،داتا گنج بخش ٹاؤن،گلبرگ ٹاؤن،واہگہ ٹاؤن، نشتر ٹاؤن،عزیز بھٹی ٹاؤن، راوی ٹاؤن،شالیمار ٹاؤن میں 31 رمضان بازار لگائے گئے ہیں، رمضان بازاروں میں خریداری صبح 09:00سے شام 06:00 بجے تک ہو رہی ہے۔ پنجاب انفارمیشن ٹیکنالوجی بورڈ۔ ایس اینڈ جی اے ڈی اور ڈی جی آئی پی ڈبلیو ایم کے دفاتر میں سروس کا معیار بہتر رکھنے کے لئے کنٹرول روم قائم کئے گئے ہیں،جبکہ معیار کو بہتر رکھنے کے لئے اور ناپ تول میں کمی کی شکایت دور کرنے کے لئے علیحدہ کاوٗنٹر بناے گئے ہیں ۔

جبکہ تمام اضلاع کے ڈی سی او ز کو حکم دیا گیا ہے کہ رمضان بازاروں میں بجلی کے پنکھوں بزرگوں کے بیٹھنے کے لئے خصوصی انتظامات کئے جائیں ۔

دہشت گردی کے مسائل کا پورے پاکستان کو سامنا ہے اور اسی چیلنج کو مد نظر رکھتے ہو ئے پنجاب حکومت نے رمضان بازاروں میں سیکیورٹی کے لئے خصوصی انتظامات کئے ہیں ۔ ڈولفن فورس کو بھی رمضان بازاروں کے ارد گرد سیکیورٹی پر نظر رکھنے کا کہا گیا ہے ، جبکہ شہریوں کے لئے پارکنگ کا بہترین انتظام بھی کیا گیا ہے۔

رمضان بازاروں میں اشیائے ضرورت مارکیٹ سے 10روپے کم دستیا ب ہوں گی۔ 10کلو کے آٹے کا تھیلا 290اور 20کلو گرام کا آٹے کا تھیلا 620روپے میں دستیاب ہوگا ۔ چینی 6روپے فی کلو گرام مارکیٹ ریٹ سے کم پر دستیاب ہو گی اور مرغی کا گوشت بھی مارکیٹ سے 10روپے کم پر دستیاب ہو گا ۔ سبزی منڈی میں لیموں کی کمی کی وجہ سے شہریوں کو مشکلات کا سامنا ہے، جس پر مرکزی کمیٹی کے سربراہ عمران نذیر نے فوری طور پر لیموں کی سپلائی کو بہتر کرنے کا کہا ہے۔یہ انتظامات صرف لاہور ہی نہیں، بلکہ پورے پنجاب میں دیکھنے میں آ رہے ہیں متعلقہ ضلع کے افسران باقاعدگی سے رمضان بازاروں کا وزٹ کر رہے ہیں اس لئے پہلے روز عوامی شکایات پر فوری طور پر ایکشن لیتے ہوئے 100 کے قریب گراں فروشوں کوجرمانے کئے گئے ہیں۔ پنجاب حکومت کے نتیجہ خیز اقدامات کے باعث امیدکی جا سکتی ہے کہ شہریوں کو ریلیف ملے گا اور وہ اس بابرکت مہینہ میں ہوشربا مہنگائی کی اذیت سے دو چار نہیں ہوں گے ۔

مزید :

کالم -