اورنج ٹرین منصوبے کیلئے حفاظتی اقدامات پر سختی سے عمل کیا جائے : خواجہ احمد حسان

اورنج ٹرین منصوبے کیلئے حفاظتی اقدامات پر سختی سے عمل کیا جائے : خواجہ احمد ...

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

لاہور(اپنے خبر نگار سے)اورنج لائن سٹیئرنگ کمیٹی کے چیئرمین خواجہ احمد حسان نے ہدایت کی ہے کہ تعمیراتی کام کے لئے طے شدہ سیفٹی سٹینڈرڈز کی سختی سے پابندی کی جائے ‘ میٹرو ٹرین منصوبے پر کام کرنے والے تمام مزدوروں اور کارکنوں کا ہیلمٹ ‘ جیکٹ ‘ گلوز اور شو ز پہننا اور دیگر حفاظتی تدابیر پرعمل درآمد کرنا یقینی بنایا جائے‘ گر می یا کسی بھی اور عذر کی بنیاد پر اس سلسلے میں کسی نرمی یا انکار کی گنجائش نہیں ۔ قیمتی ا نسانی جانوں کا ضیاع روکنے کے لئے حفاظتی تدابیر پر نہ صرف سختی سے عمل درآمد کیا جائے بلکہ انہیں مزید بہتر بنایا جائے ۔ اورنج لائن میٹروٹرین کے ٹریک کی تعمیر کے لئے یو ٹب گرڈرز کا ٹیسٹ کامیاب رہا ہے ۔پاکستان میں یہ سٹرکچر پہلی مرتبہ بنایا گیا ہے اورمقام شکر ہے کہ اس سلسلے میں پہلی کوشش ہی کامیابی سے ہمکنار ہوئی ہے ۔اس کامیابی کا کریڈٹ ایل ڈی اے ‘ نیسپاک اور حبیب کنسٹرکشن کو جاتا ہے ۔ منصوبے سے متاثر ہونے والے تین سکولوں کی تعمیر نو کا پلان فوری طورپر تیار کیا جائے اور اضافی وسائل استعمال کر کے موسم گرما کی تعطیلات کے دوران تعمیر نو کا کام مکمل کیا جائے ۔وہ گزشتہ روز منصوبے پر جاری کام کی رفتار کا جائزہ لینے کے لئے سٹیرنگ کمیٹی کے اجلاس کی صدارت کر رہے تھے ۔اجلاس کو بتایاگیا کہ منصوبے کا 32فیصد تعمیراتی کام مکمل ہو چکا ہے ۔ڈیرہ گجراں سے چوبرجی تک پیکیج ون کا 38.2فیصد ‘ چوبرجی سے علی ٹاؤن تک پیکیج ٹو کا 32.8فیصد ‘پیکیج تھری سٹیبلینگ یارڈ کا 27.39فیصد جبکہ پیکیج فور ڈپو کی تعمیر کا 29فیصد کام مکمل کیا جا چکا ہے اور اسے شیڈول کے مطابق سال رواں کے آخر تک مکمل کرنے کے لئے تمام ذرائع اور وسائل بروئے کار لائے جا رہے ہیں ۔اجلاس کو بتایا گیا کہ لاہور ڈویلپمنٹ اتھارٹی نے شہریوں کو درپیش مشکلات کے پیش نظر تعمیراتی کام والے علاقوں میں متاثرہ سڑکوں کی تعمیرنو اور بحالی کا کام فوری طور پر شروع کر دیا ہے ۔ پیکج ون کے مختلف سیکشنز پر تعمیراتی کمپنی ڈیرہ گجراں سے یو ای ٹی تک مختلف مقامات پر سڑکیں دوبارہ تعمیر کر رہی ہے ۔ باغبانپورہ ‘ اسلام پارک ‘سلامت پورہ اور یو ای ٹی سمیت اہم سیکشنز پر نئے سرے سے سڑکوں کی تعمیر تسلی بخش طور پر جاری ہے ۔خواجہ ا حمد حسان نے ہدایت کی کہ بلندی پر کام کرنے والے مزدوروں کے لئے بیلٹ پہننا لازمی ہے ‘ ان کے لئے حفاظتی جال بھی بچھایا جائے اورکھدائی کے مقامات پر خبردار کرنے والی ٹیپ لگائی جائے۔ تمام سڑکوں کی تعمیر نو 30جون تک مکمل کر لی جائے ۔