کرپشن سے متعلق اراکین پارلیمنٹ سے حلف لیا ہے تو شاید یہاں کوئی نہ رہے :ظفر اللہ جمالی

کرپشن سے متعلق اراکین پارلیمنٹ سے حلف لیا ہے تو شاید یہاں کوئی نہ رہے :ظفر ...

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


اسلام آباد (خصوصی رپورٹ) مسلم لیگ (ن) کے ر ہنما اورسابق وزیر اعظم میر ظفر اللہ جمالی نے کہا ہے کہ میں نے پاکستان بنتے اور پھلتے پھولتے دیکھا ہے اور اب خدانخواستہ پاکستان ڈوبتا دیکھ رہا ہوں،ہمیں اپنی سرحدوں کے پار کیا ہو رہا ہے اس حوالے سے دیکھنا ہوگا، ہو سکتا ہے میری ایوان سے آخری تقریر ہو،میں سب سے ہاتھ جوڑ کردرخواست کرتا ہوں اس بحث کو چھوڑیں کس نے کم کرپشن کی اور کس نے زیادہ ، یہاں صرف پاکستان کی بات کریں، سپیکر صاحب آپ سب ارکان سے قرآن پاک پر حلف لیں کہ کسی نے کرپشن تو نہیں کی یا جو الیکشن میں اخراجات کی حد مقرر کی گئی تھی اس کے مطابق اخراجات کر کے وہ یہاں آیا ہے تو اس ایوان میں جتنے بیٹھے ہیں ان میں سے کوئی نہیں رہے گا،پاکستان ہے تو وزیر اعظم نواز شریف ہے ،پاکستان ہے تویہ پارلیمنٹ ہے اور ہم سب اس کے رکن ہیں،پاکستان کو اپنی ترجیحات بدلنا ہوں گی،بدقسمتی سے ہمارا کوئی مستقل وزیر خارجہ نہیں ، وزیر اعظم صاحب بہت سے قابل لوگ ہیں اس منصب کیلئے ان کو موقع دیں۔وہ جمعرات کو قومی اسمبلی میں بجٹ پر بحث کے دوران اظہار خیال کر رہے تھے۔مسلم لیگ (ن) کے رکن میر ظفر اللہ خان جمالی نے کہا کہ وزیر خزانہ کو مبارکباد دیتا ہوں کہ انہوں نے چوتھا بجٹ پیش کیا، حکومت نے دفاع کیلئے گزشتہ سال کی نسبت کم رکھا جس کو زیادہ رکھنا چاہیے تھا،حکومت کے مطابق ملک میں ٹیکس کی کولیکشن میں اضافہ ہو رہا ہے جو خوشی کی بات ہے ۔ پاکستان کو اپنی ترجیحات بدلنا ہوں گیں،انہوں نے کہا کہ ہو سکتا ہے میری ایوان سے آخری تقریر ہو،ہمیں آپس کی لڑائی کو ختم کر کے صرف ملک کیلئے سوچنا ہوگا،ہمیں آپسی اختلافات کو ختم کر کہ ایک ہونا ہوگا جو وقت کا تقاضہ ہے،کس نے کم کرپشن کی کس نے زیادہ اس کو بھول جانا چاہیے۔میرظفر اللہ جمالی نے کہا کہ سپیکر صاحب اپ سب ارکان سے قرآن پاک پر حلف لیں کہ کسی نے کرپشن تو نہیں کی یا جو الیکشن میں اخراجات کی حد مقرر کی گئی تھی اس کے مطابق اخراجات کر کے وہ یہاں آیا ہے تو اس ایوان میں جتنے بیٹھے ہیں ان میں سے کوئی نہیں رہے گا۔میں سب سے ہاتھ جوڑ کردرخواست کرتا ہوں اس بحث ہو چھوڑیں کس نے کرپشن کم کی اور کس نے زیادہ ، یہاں صرف پاکستان کی بات کریں،پاکستان ہے تو وزیر اعظم نواز شریف ہے ،پاکستان ہے تویہ پارلیمنٹ ہے اور ہم سب اس کے رکن ہیں۔

مزید :

علاقائی -