ماہ صیام میں بجلی، سوئی گیس کا جن بے قابو، سحر، افطار اور تراویح اوقات میں لوڈ شیڈنگ، عوام سراپا احتجاج

ماہ صیام میں بجلی، سوئی گیس کا جن بے قابو، سحر، افطار اور تراویح اوقات میں ...

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


ملتان، خانیوال، بستی ملوک ، ہاڑی، لڈن، ساہوکا، کوٹ ادو، احمد پور شرقیہ ، ڈاہرانوالہ(سٹاف رپورٹر+ کامرس رپورٹر+ نمائندگان) حکومتی دعوؤں کے برعکس ملتان سمیت جنوبی پنجاب میں بجلی کی طویل لوڈ شیڈنگ کا سلسلہ جاری ہے‘ نواحی (بقیہ نمبر49صفحہ12پر )
علاقوں میں سحر وافطار اور تراویح اوقات میں بجلی بندش سے روزہ داروں کو شدید مشکلات کا سامنا رہا ،مذکورہ صورتحال کیخلاف ملتان میں تاجروں جبکہ مختلف شہروں میں لوڈ شیڈنگ سے ستائے عوام نے احتجاجی مظاہرے کئے تفصیل کیمطابق کوٹ ادوکے علاقے سنانواں میں افطاری اور تراویح کے اوقات میں بھی بجلی کی لوڈ شیڈنگ کی گئی جس پر عوام نے احتجاجی مظاہرہ کیا ‘انہوں نے مطالبہ کیا کہ حکومت اپنے لوڈشیڈنگ کے شیڈول پر عملدرآمد کرائے ورنہ روڈ بلاک کر کے احتجاج کیا جائے گا۔قبل ازیں قومی تاجر اتحاد کے زیراہتمام بجلی کی بڑھتی ہو ئی لوڈشیڈنگ کے خلاف تحصیلدار موڑ پر تاجروں نے احتجاجی مظاہرہ کیا گیا جس کی قیاد ت تاجر رہنما سلطان محمود ملک نے کی اور اس موقع پر دیگر تاجر رہنماؤں شیخ محمد شفیق ، محمد صدیق تھہیم ، محمد اقبال ڈوگر ، خرم سلطان ودیگر بھی موجود تھے پر ان کا کہنا تھا کہ حکومت تین سالوں میں عوام کو کوئی ریلیف نہیں دے سکی بلکہ بجلی کی لوڈشیڈنگ میں دس دس گھنٹے تک اضافے نے تاجر برادری اور عوام کو پریشان کر کے رکھ دیا ہے لوڈشیڈنگ کی وجہ سے معیشت بھی متاثر ہے سحر و افطار کے موقع پر بھی بجلی وگیس کی لوڈشیڈنگ نے شہریوں کو بے چین کر کے رکھ دیا ہے لوڈشیڈنگ پر فوری طور پر قابو نہ پایا گیا تو تاجر برادری میپکو اور سوئی گیس دفاتر کا گھیراؤ کرنے پر مجبور ہو جا ئے گی ۔بستی ملوک سے نمائندہ پاکستان کیمطابق بستی ملوک شہر اور گردونواح میں لوڈشیڈنگ اپنے عروج کو پہنچ گئی گاؤں چک نمبر 10کا رہائشی رانا نثار احمد شدید گرمی سے بے ہوش ہو گیا جسے قریبی ہسپتال داخل کروادیا گیانماز ظہر اور نماز عصر کے وقت لوڈشیڈنگ کی وجہ سے روزہ داروں کو گرمی میں نماز ادا کرنی پڑتی ہیں شہریوں نے چیف میپکو ملتان اور اعلی حکام سے اپیل کی ہے کہ ماہ رمضان کا خیال کرتے ہوئے واپڈا لوڈشیڈنگ بند کریں خانیوال سے ڈسٹرکٹ رپورٹر کے مطابق ماہ صیام میں بجلی کی غیر اعلانیہ لوڈ شیڈنگ نہ کرنے کے حکومت کے دعوے ریت کے پہاڑ ثابت ہوئے ماہ صیام شروع ہوتے ہی جہانگیر آباد فیڈر ،اورسٹی ون فیڈر سمیت تمام فیڈروں پر سحری وافطاری نماز تراویح کے اوقات میں بجلی کی طویل غیر اعلانیہ لوڈ شیڈنگ سحری کی تیاری اور افطاری سمیت نماز تراویح کی ادائیگی میں روزہ داروں کو شدید پریشانی کا سامنا ہے جبکہ دن کے اوقات میں بھی بجلی کی غیر اعلانیہ لوڈ شیڈنگ کا سلسلہ جاری ہے ،رانالیاقت علی ،صبغت اللہ ،عبدالستار ،رانا طاہر ،رانا اویس علی ،ملک احسن نواز ،ملک عمران ،جاوید ہنجرا،سفارش علی ،ریاست علی ،بابا وکیل سمیت ودیگر نے وفاقی وزیر پانی وبجلی سے نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے۔خانیوالسے نمائندہ پاکستان کیمطابق حکمرانوں نے قوم سے مسلسل جھوٹ بولا ،نواز حکومت کوئی وعدہ پورا نہ کرسکی رمضان المبار ک میں طویل لوڈ شیڈنگ کا عذاب مسلط کیا گیا ماہ رمضان المبارک میں بلاتعطل بجلی کی فراہمی کی بجائے سحری ،افطاری اور نمازوں کے اوقات میں بھی لوڈ شیڈنگ جاری ہے ان خیالات کا اظہار جمعیت علماء اسلام کے صوبائی جنرل سیکرٹری مفتی خالد محمودازہر نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا ۔وہاڑی سے بیورو رپورٹ+نما ئندہ خصوصی کے مطابق میپکو وہاڑی نے غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ کی حد کردی ماہِ صیام کے اوقات سحر و افطار اور تراویح کے وقت بھی بجلی غائب ، عوام سراپااحتجاج ، عوامی وسماجی حلقوں کا میپکو وہاڑی کو غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ ختم کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔لڈن سے نامہ نگار کے مطابق رمضان المبارک میں بھی بجلی کی لوڈ شیڈنگ کم نہ ہو سکی ،لڈن اور گردونواح میں گرمی کے ستائے لوگ غیر اعلانیہ لوڈ شیڈنگ کی وجہ سے سخت پریشان ہیں ،لوگوں کا کہنا ہے کہ جب سحری اور افطاری کا وقت ہوتا ہے اس وقت بھی بجلی نہیں ہوتی ہے جسکی وجہ سے روزہ داروں کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔ساہوکاسے نمائندہ پاکستان کے مطابق رمضان المبارک کے مقدس مہینے میں جب ہر شخص حکم خداوندی اور اللہ تعالیٰ کی خوشنودی حاصل کر نے کے لئے روزہ جیسی خاص عبادت میں مصروف ہو تا ہے حکومت کے اعلان کے باوجود واپڈا نے سحری اور افطاری کے وقت لوڈ شیڈنگ کر نا معمول بنا لیا ہے بجلی کی غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ سے روزہ دار نڈھال ہو کر رہے گئے ہیں دیہاتی علاقے لاکھوں کی آبادی والا قصبہ ساہوکا ،دیوان صاحب ،جملیرا،موضع بھٹیاں ،مراد علی میں لوڈشیڈنگ کادورانیہ 15گھنٹے سے 18گھنٹے کر دیا ہے جس کی وجہ نظام زندگی درہم برہم ہو کر رہے گیا۔کوٹ ادو سے تحصیل رپورٹرکے مطابق سحری وافطاری کے اوقات میں بجلی بند نہ ہونے کا حکومتی دعویٰ جھوٹ کا پلندہ ثابت ہوا،گرمی میں شدت اور رمضان المبارک شروع ہونے کے باوجود بھی طویل لوڈ شیڈنگ کا سلسلہ زور پکڑ گیا ہے، جسکی وجہ سے روزہ داروں کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا ہے، کوٹ ادو کے اکثر دیہی علاقوں میں بجلی تمام دن غائب ہونا معمول بن گیا ہے ،صارفین نے حکومت سے مطالبہ کیا کہ رمضان المبارک کے مہینے میں بلا تعطل بجلی فراہم کی جائے ۔ احمد پورشرقیہ سے سٹی رپورٹر کے مطا بق واپڈا والوں نے رمضا ن المبارک میں لوڈشیڈنگ میں کمی کی بجائے اور بھی اضافہ کر دیا ۔ اور روزانہ گھنٹوں غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ کا سلسلہ جاری ہے۔ جس سے روزہ دار انتہائی پریشانی کاشکارہیں۔ شہریوں محمد عاشق ، مشتا ق احمد، خلیل احمد ، منور قریشی ، علی احمد، نے بتا یا کہ حکومت کی جانب سے رمضا ن المبارک میں کم لوڈشیڈنگ کرنے کے دعوے جھوٹے ثابت ہو ئے ہیں۔ اور پہلے سے بھی زیادہ لوڈشیڈنگ کی جارہی ہے ۔ڈاہرانوالہ سے نامہ نگار کیمطابق ڈاہرانوالہ اور اس کے گردو نواح میں گزشتہ کئی روز سے گرمی کی شدید لہر جاری ہے ۔دن کے اوقات میں درجہ حرارت 48 ڈگری سینٹی گریڈ سے بھی تجاوز کر جاتا ہے قیامت خیز گرمی کی وجہ سے روزہ داروں کو شدید مشکلات کا سامنا ہے اور گرمی کی وجہ سے غیر اعلانیہ لوڈ شیڈنگ میں بھی اضافہ ہو گیا ہے۔ بچے بوڑھے اور نوجوان گھروں میں دبکے رہے ۔