فوڈ ٹیسٹنگ لیبارٹری کے قیام کا منصوبہ ترک کر دیا گیا

فوڈ ٹیسٹنگ لیبارٹری کے قیام کا منصوبہ ترک کر دیا گیا

لاہور (جنر ل ر پو رٹر ) خوراک کا معیار جانچنے کیلئے دس برس قبل شروع ہونے والا سٹیٹ آف دی آرٹ فوڈ ٹیسٹنگ لیبارٹری کے قیام کا منصوبہ ترک کر دیا گیا۔ برڈ ووڈ روڈ پر کروڑوں کی لاگت سے تعمیر ہونے والی فوڈ لیب کی نئی عمارت میں اب محکمہ پرائمری ہیلتھ کے دفاتر قائم ہونگے۔دس برس قبل صوبے میں جدید فوڈ ٹیسٹنگ لیبارٹری کے قیام کے منصوبے کا آغاز کیا گیا تھا، جسے2009 میں مکمل ہونا تھا، تاہم منصوبہ تاخیر سے دوچار ہوا اور تین برس قبل 4 کروڑ روپے سے عمارت کی تعمیر مکمل کر لی گئی لیکن خوراک کے نمونوں کے تمام ٹیسٹوں کیلئے جدید مشینری کی تنصیب سے قبل ہی فوڈ لیبارٹری کا منصوبہ ترک کر دیا گیا۔ حکومت کی جانب سے فوڈ لیب کے بجائے اب پنجاب ایگریکلچر فوڈ اینڈ ڈرگ اتھارٹی قائم کی گئی ہے اور فیصلہ کیا گیا کہ ٹھوکر پر فرانزک سائنس ایجنسی کے قریب ایک لیبارٹری بنائی جائے گی جو نئی اتھارٹی کے تحت کام کرے گی۔ اس اقدام کے بعد اب کروڑوں روپے سے دس برسوں میں تعمیر ہونے والی فوڈ لیبارٹری کی عمارت کو محکمہ پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ کے سپرد کر دیا گیا ہے جہاں آئندہ مالی سال سے محکمہ پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ کے دفاتر اس عمارت میں شفٹ کر دیئے جائیں گے۔

مزید : صفحہ آخر