سپاٹ فکسنگ : شرجیل خان کا پھرپی سی بی پر تاخیری حربے استعمال کرنیکا الزام

سپاٹ فکسنگ : شرجیل خان کا پھرپی سی بی پر تاخیری حربے استعمال کرنیکا الزام

لاہور( مانیٹرنگ ڈیسک) سپاٹ فکسنگ کیس میں معطل کرکٹر شرجیل خان نے ایک بار پھر پاکستان کرکٹ بورڈ پر تاخیری حربے استعمال کر نے کا الزم عائد کردیا،دوسری طرف پی سی بی کے قانونی مشیر تفضل رضوی نے کہا ہے پاکستان کرکٹ بورڈ کا مقصد کسی کو سزا دلوانا نہیں بلکہ حقائق ٹریبیونل کے سامنے لانا ہے، بورڈ نے نیشنل کرائم ایجنسی کی جانب سے فراہم کیے گئے شواہد پیش کرنے کی اجازت بھی طلب کی ہے ۔ تفصیلات کے مطابق شرجیل کے وکیل شیغان اعجاز نے کہا پی سی بی کی درخواست غیرقانونی ہے، بورڈ کیس کا فیصلہ نہیں چاہتا، اسلئے تاخیری حربے استعمال کیے جا رہے ہیں، معاملہ سول مقدمات کی طرح چلانا چاہتا ہے، شرجیل خان کو بطور گواہ پیش کرنے کا عندیہ دیا گیا ہے، تاہم شرجیل خان اور خالد لطیف کا ہر جگہ اکٹھا رہنا محض اتفاق ہے، شرجیل خان 13 جون کو ٹریبیونل میں جواب جمع کروائیں گے۔

مزید : صفحہ آخر