شیر شاہ سوری کے دور میں بنی مسجد شاہ رکن عالم فن تعمیر کا اعلیٰ نمونہ

شیر شاہ سوری کے دور میں بنی مسجد شاہ رکن عالم فن تعمیر کا اعلیٰ نمونہ

ملتان (سٹی رپورٹر)قلعہ کہنہ قاسم باغ پر درگاہ حضرت شاہ رکن عالم کے احاطے میں واقع جامع مسجد شاہ رکن عالم کو سوری خاندان کے سپوت سلطان شیر شاہ سوری نے 1542ء میں تعمیر کرایا۔ 474 سالہ پرانی مسجد فن تعمیر کا اعلیٰ نمونہ ہے۔مسجد ایک بڑے ہال اور وسیع صحن پر واقع ہے جس میں بیک وقت ہزاروں نمازیوں کی گنجائش موجود ہے مسجد کے دو بڑے اور دو چھوٹے مینار ہیں جامع مسجد شاہ رکن (بقیہ نمبر35صفحہ12پر )

عالم مکمل چھوٹی انیٹوں سے بنائی گئی ہے جبکہ مسجد کے فرش بھی چھوٹی اینٹوں سے بنا ہوئے ہیں ، مسجد کے تینوں اطراف میں دروازے ہیں جس کی وجہ سے مسجد ہوا دار ہے سخت گرمی کے باوجود مسجد ہر وقت ٹھنڈی رہتی ہے جامع مسجد قلعہ پر اونچے مقام پر ہونے کی وجہ سے سے دور دور سے دیکھائی دیتی ہے مسجد محکمہ اوقاف کے زیر انتظام ہے جہاں سیکڑوں سال سے نماز باجماعت ادا کی جا رہی ہے۔ سلطان غیاث الدین تغلق کی جانب سے تعمیر کردہ مزار حضرت شاہ رکن عالم کے احاطے میں واقع ہونے کی وجہ سے مسجد کا حسن دوبالا ہو جاتا ہے۔ درگاہ کے سجادہ نشین مخدوم شاہ محمود حسین قریشی بھی اپنی وزارت کے دور میں مسجد کی تزئین و آرائش کرا چکے ہیں قاری سہیل رضا مسجد میں نماز تراویح کی امامت کرا رہے ہیں۔

مزید : ملتان صفحہ آخر