کوٹ ادو ‘ فائر بریگیڈ سسٹم ناکارہ ‘ عملہ ِادھر اُدھر ‘ دفتر میں ویرانی

  کوٹ ادو ‘ فائر بریگیڈ سسٹم ناکارہ ‘ عملہ ِادھر اُدھر ‘ دفتر میں ویرانی

  

کوٹ ادو (تحصیل رپورٹر) مےونسپل کمیٹی کوٹ ادوجوکہ کروڑوں روپے سالانہ ٹیکس وصول کرتی ہے، شہریوں کو بنیادی سہولیات دینے میں ناکام ہوچکی ہے،ماہانہ کروڑوں روپے کی آنے والی گرانٹ بندر بانٹ کرکے تقسیم کی جارہی ہے جبکہ کوٹ ادو کے شہریوں کیلئے کیپکو کی جانب سے دی (بقیہ نمبر36صفحہ12پر )

جانے والی کروڑوں کی فائر بریگیڈ جوکہ کافی عرصہ سے خراب ہے ،مےونسپل کمیٹی کے افسران کی نا اہلی کی وجہ سے5 سال سے ناکارہ ہو چکی ہے جسکی مرمت کی مد میں گورنمنٹ کو لاکھوں کا ٹیکہ لگنے کے باوجود ٹھیک فائربریگیڈ ٹھیک نہ ہوسکی،دیکھ بھال اور بر وقت مرمت نہ کرانے پرفائر بریگیڈ کا پی ٹی او سسٹم مکمل طور پر ناکارہ ہو گیا ہے جبکہ فائربریگیڈ گاڑی کے ٹائر ،ڈی سی پی کیمیکل سلنڈر بھی خالی ہونے کے بعد ناکارہ ہو گئے ہیں،ہاﺅس پائپ سمیت مانیٹر سسٹم بھی کام نہیں کرتا، ،مذکورہ فائر بریگیڈجو کہ بلدےہ عملہ کیلئے سونے کی چڑےا بنی ہوئی ہے کی مرمت کی آڑ میں لاکھوں خور برد ہو چکے ہیں،دریں اثناءیہ بھی معلوم ہو اہے کہ فائر برگیڈ عملہ کی تعداد جو کہ 23ملازمین پر مشتمل ہے،فائر بریگیڈ نہ ہونے پر بے کار ہو کر مفت کی تنخواہیں وصول کر رہاہے اور دفتر میں بھی آنا چھوڑ دےاہے جبکہ فائر بریگیڈ کا دفتر عملہ نہ ہونے پر بھوت بنگلہ کی شکل اختےار کر گیا ہے جہاں نشئےوں نے ڈیرے ڈال لئے ہیں جبکہ ایمرجنسی پی ٹی سی ایل نمبر جس کا بل صرف13سو روپے تھا میونسپل کمیٹی کے افسران کی عیاشی کی وجہ سے بند ہو گیا ہے،مرکزی گیٹ کے سامنے لگا فائر بریگیڈ کاتشہیری بورڈ بھی اتار لیاگیا،دوسری طرف گزشتہ5 سال میں فائر بریگیڈ کی خرابی کی وجہ سے کوٹ ادو کے شہرےوں کو آگ لگنے کے واقعات سے کرڑوں کا نقصان اٹھانا پڑا ،گزشتہ5سال کے دوران کوٹ ادو شہرمیں کئی گھروں اور دوکانوں میں آتشزدگی سے کروڑوں روپے کا نقصان ہو چکا ہے ، گزشتہ5سال قبل جمشید پٹرول پمپ پر شارٹ سرکٹ سے آگ بھڑکنے سے پمپ کا ایک ےونٹ جل کر راکھ ہو گیاتھاجبکہ3سال قبل 8فروری کی شب کوٹ ادو کے رہائشی ندیم احمد کی وڈ ورکشاپ واقع نزد پنجاب گروپ آف کالج کی ورکشاپ میں پڑا25لاکھ کا تیار شدہ فرنیچر کار آمد لکڑی سمیت ورکشاپ میں کھڑی مشینری اور تمام عمارت جل کر راکھ ہو گئی تھی، موضع چوہدری نزد نعیم سلیم آئل ملز کے قریب مقامی زمیندار عباس شاہ کے فصل کماد میں کماد کی کٹائی کے دوران سگریٹ جلانے سے کماد میں آگ بھڑک اٹھی تھی جبکہ گزشتہ سال دائرہ دین پناہ میں کپڑے کی دکان میں آتشزدگی سے 60لاکھ مالےت کا کپڑا جل کر راکھ ہوگیاتھا،گزشتہ سے پیوستہ شب عیدالفطر کی شام بھی جی ٹی روڈ پر قائم منیب شور سٹور میں آتشزدگی سے لاکھوں کے جوتے سمیت دیگر دکان کا سامان جل کرراکھ ہو گیا تھا، اطلاع کے با وجو دفائر بریگیڈ ٹائر پنکچرہونے کی وجہ سے تاخیر سے موقع پر پہنچی تھی جسکی وجہ سے ہزاروں کا نقصان ہو گیا تھا، اس بارے شہریوں نے فائر بریگیڈ کی مرمت نہ کرانے پر کہا کہ ساڑھے دس کروڑ کی آنے والی گرانٹ سمیت ہر ماہ آنے والی گرانٹ بندر بانٹ ہو جاتی ہے ،ملازمین کو بھی مکمل تنخواہوں کی ادائیگی نہیں کی گئی جبکہ عرصہ دراز سے خراب فائر بریگیڈ کی مرمت نہیں کرائی گئی جس سے شہر کسی بھی وقت بڑا ناخوشگوار واقعہ پیش آسکتا ہے

مزید :

ملتان صفحہ آخر -