ویزوں کا جلد اجراء، کابل میں پاکستانی سفارتخانے پر مشتعل افغان شہریوں کا دھاوا، عملہ اور عمارت محفوظ رہے 

ویزوں کا جلد اجراء، کابل میں پاکستانی سفارتخانے پر مشتعل افغان شہریوں کا ...

  

کابل(مانیٹرنگ ڈیسک، نیوز ایجنسیاں) افغانستان میں مشتعل ہجوم نے پاکستانی سفارتخانے پر دھاوا بول دیا۔میڈیارپورٹس کے مطابق افغانستان کے دارالحکومت کابل میں واقع پاکستانی سفارتخانے پر پاکستان آنے کے خواہشمند مشتعل افغان شہریوں نے دھاوا بول دیا، سفارتخانے کے باہر موجود سکیورٹی اہلکاروں نے صورتحال کو قابو میں کرلیا۔سفارت خانے پر دھاوا بولنے والے افراد جلد اور فوری ویزہ جاری کرنے کا مطالبہ کر رہے تھے،  ویزا کے اجرا میں تیزی لائی جائے، زیادہ کاؤنٹر بنائے جائیں۔ مشتعل افراد کے حملے میں سفارتخانے کی عمارت یا عملے کو کسی قسم کا نقصان نہیں پہنچا۔ افغان سکیورٹی فورسز نے مشتعل افراد کو منتشر کردیا۔پاکستانی وزارت خارجہ کی جانب سے افغانستان کے حکام کو کابل میں پاکستانی سفارتخانے کے عملے کی حفاظت کو یقینی بنانے کیلئے رابطہ کیا گیا جبکہ افغان حکام نے بھی ایسے واقعات کے تدارک کی یقین دہانی کرائی ہے۔سفارتی ذرائع کے مطابق کابل میں پاکستانی سفارت خانہ روزانہ کی بنیاد پر 2 ہزار ویزے جاری کرتا ہے جس کیلئے سفارتی عملہ دن و رات تندہی سے کام کرتا ہے اس لیے ویزہ ملنے میں تاخیر کا بہانہ بنا کر سفارتخانے میں دھاوا بولنا قابل مذمت ہے۔۔یاد رہے کہ پاکستان میں لاکھوں افغان مہاجر موجود ہیں جو روس اور بعد میں امریکہ کی جانب سے افغانستان پر حملے کے بعد پاکستان آئے۔ ان مہاجرین میں سے بہت سے لوگ پاکستان کی شہریت بھی اختیار کر چکے ہیں اور آج بھی افغانستان سے پاکستان آنے والے لوگوں کی تعداد بہت زیادہ ہے جبکہ دوسری جانب خیبرپختونخوا حکومت نے 30 جون کو افغان مہاجرین کو پناہ دینے کی مدت مکمل ہونے کے بعد اس مدت میں توسیع دینے سے انکار کر دیا ہے۔ خیبرپختونخوا حکومت کا کہنا ہے کہ افغان باشندے اب واپس جائیں۔

پاکستان سفارتخانہ

مزید :

صفحہ اول -