پاکستان افغانستان ایکشن پلان برائے امن و یکجہتی کا جائزہ اجلاس آج ہو گا

  پاکستان افغانستان ایکشن پلان برائے امن و یکجہتی کا جائزہ اجلاس آج ہو گا

  

اسلام آباد (این این آئی)پاکستان افغانستان ایکشن پلان برائے امن و یکجہتی کا جائزہ اجلاس (آج)پیر کو اسلام آباد میں ہو گا، پاکستانی وفد کی قیادت سیکرٹری خارجہ سہیل محمود جبکہ افغان وفد کی قیادت نائب وزیرخارجہ ادریس زمان کریں گے، یہ دونوں ممالک کے درمیان ایکشن پلان بارے پہلا جائزہ اجلاس ہوگا۔اتوار کو ترجمان دفتر خارجہ کی طرف سے جاری کئے گئے بیان کے مطابق  افغانستان پاکستان ایکشن پلان برائے امن و یکجہتی کا قیام مئی دو ہزاراٹھارہ میں عمل میں لایا گیا تھا، ایکشن پلان کا مقصد دونوں ممالک کے درمیان تعاون کے مختلف شعبوں میں دوطرفہ جامع ادارہ جاتی روابط کا فریم ورک ہے، اس میکانزم کے تحت پانچ ورکنگ گروپ قائم کئے ہیں، یہ ورکنگ گروپ سیاسی و سفارتی، افواج کے درمیان کو آرڈینیشن، انٹیلیجنس تعاون، اقتصادی و پناہ گزینوں کے موضوعات پر ہیں، گروپ کا افتتاحی اجلاس بائیس جولائی دو ہزار اٹھارہ کو کابل میں منعقد ہوا تھا، پہلے اجلاس میں دونوں ممالک نے دوطرفہ تعاون کے فروغ کی کوششوں کو بڑھانے اور اعتماد کے قیام پر اتفاق کیا تھا، اجلاس میں فریم ورک پر اب تک کی پیشرفت کا جائزہ لینے کے علاوہ تعاون کے متفقہ شعبوں پر تبادلہ خیال کیا جائے گا۔

پاک افغان اجلاس

مزید :

صفحہ آخر -