مشیر اطلاعات سند ھ کا بداخلاقی کا شکار جمنا کو مکمل طبی اور قانونی مدد فراہم کرنے کا اعلان

مشیر اطلاعات سند ھ کا بداخلاقی کا شکار جمنا کو مکمل طبی اور قانونی مدد فراہم ...

کراچی (آ ئی این پی)صوبہ سندھ کے ضلع ٹنڈو محمد خان میں زیادتی کا شکار ہونے والی جمنا کیس کی رپورٹ سندھ حکومت کو موصول ہوگئی ہے،جبکہ مشیراطلاعات سندھ مرتضی وہاب کی ملزمان کو قرار واقعی سزا دینے کی یقین دہانی کرائی ہے،تفصیلات کے مطابق سات جون کو ٹنڈو محمدخان میں دو اوباشوں لڑکوں نے بارہ سالہ جمنا کو کچی شراب پلاکر مسلسل دو روز تک اپنے جنسی ہوس کا نشانہ بنایا تھا،پولیس کے مطابق لڑکی بے ہوشی کی حالت میں ٹنڈو محمد خان شوگر ملز گراؤنڈ سے ملی تھی،اطلاع ملنے پرپولیس شوگرملز گرانڈ پہنچی اور بچی کو طبی معائنے کیلئے اسپتال منتقل کیا،زیادتی کا شکار بچی کو تشویشناک اسپتال میں سول اسپتال حیدرآباد منتقل کیا گیا تھا، جہاں ڈی ایچ او ڈاکٹر مقبول ملاح نے بچی سے زیادتی کی تصدیق کی تھی،واقعے کی تصاویر اور ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہونے کے بعد عوام کی جانب سے سخت ردعمل آیا تھا اور انہوں نے گھنا ؤنے واقعے میں ملوث افراد کو فوری گرفتار کرنے اور قرار واقعی سزا دینے کا مطالبہ کیا تھا۔جس پر سندھ حکومت نے ایکشن لیتے ہوئے آئی جی سندھ سے واقعے کی رپورٹ طلب کی تھی، پولیس کی ابتدائی رپورٹ سندھ حکومت کو موصول ہوچکی ہے،جس میں پولیس نے بتایا کہ زیادتی کیس میں دو ملزمان روشن شیخ اور رجب علی کو گرفتار کیا جاچکا ہے۔دوسری جانب مشیراطلاعات سندھ مرتضی وہاب نے متاثرہ خاندان کو یقین دلایا ہے کہ ملزمان کو قرار واقعی سزا دیکر نشان عبرت بنایا جائے گا جبکہ جمنا کو مکمل طبی اور قانونی مدد فراہم کی جائے گی۔

مشیر اعلان

مزید : رائے /راولپنڈی صفحہ آخر