نظریہ پاکستان ٹرسٹ ارکان کا جسٹس شریف بخاری کی وفات پر اظہار تعزیت

نظریہ پاکستان ٹرسٹ ارکان کا جسٹس شریف بخاری کی وفات پر اظہار تعزیت

  

لاہور (لیڈی رپورٹر) تحریک پاکستان کے مخلص کارکن‘سابق صدر اسلامی جمہوریہ پاکستان و چیئرمین نظریہئ پاکستان ٹرسٹ محمد رفیق تارڑ، چیئرمین تحریک پاکستان ورکرز ٹرسٹ چیف جسٹس(ر) میاں محبوب احمد، جسٹس(ر) خلیل الرحمن خان، میاں فاروق الطاف، سینیٹر ولید اقبال، چودھری نعیم حسین چٹھہ، کارکنان تحریک پاکستان کرنل(ر) محمدسلیم ملک، چودھری ظفر اللہ خان، خواجہ خورشید وائیں، ایم کے انور بغدادی، میاں ابراہیم طاہر، بیگم ثریا خورشید،بیگم مہناز رفیع اور نظریہئ پاکستان ٹرسٹ کے سیکرٹری شاہد رشیدنے اپنے ایک مشترکہ تعزیتی بیان میں جسٹس (ر) شریف حسین بخاری، عزیز ظفر آزاد اور سلیم اختر پروانہ کے انتقال پر گہرے دکھ اور غم کا اظہار کیا ہے۔ تعزیتی بیان میں کہا گیا ہے کہ ان تینوں شخصیات نے اپنی زندگی پاکستان کی تعمیروترقی اور نظریہئ پاکستان کی ترویج واشاعت کیلئے وقف کر رکھی تھی۔

وہ سراپا پاکستان تھے اور پاکستان سے گہری محبت ان کے رگ وپے میں رچی بسی تھی۔ بیان میں سوگوار خاندانوں سے تعزیت کا اظہارکیا گیا اورمرحومین کی مغفرت کیلئے دعا کی کہ اللہ تعالی انہیں جوار رحمت میں جگہ عطا فرمائے اور سوگوار خاندان کو صبرجمیل عطا فرمائے۔ جسٹس (ر) شریف حسین بخاری لاہور ہائیکورٹ کے سابق جج تھے۔ آپ سرینگر سے ہجرت کر کے لاہور آئے اور پھر یہیں کے ہو کر رہ گئے۔ آپ کشمیر ایکشن کمیٹی کے چیئرمین بھی رہے اور مسئلہ کشمیر کو مختلف فورمز پر اٹھاتے رہے۔ مقبوضہ کشمیر کو بھارتی تسلط سے آزاد دیکھنا ان کی سب سے بڑی خواہش تھی۔ عزیز ظفر آزاد قومی زبان تحریک کے صدر اور پرانے مسلم لیگی تھے۔ وہ ایک نظریاتی شخصیت تھے اور نظریہئ پاکستان کی ترویج واشاعت کیلئے گرانقدر کام کیا۔ قومی زبان اردو کو فروغ دینے کیلئے ان کی خدمات ناقابل فراموش ہیں۔ انہوں نے اپنے کالموں کے ذریعے نسل نو کو اپنی شاندار اقدار کے ساتھ جڑے رہنے کا درس دیا۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -