دورہ انگلینڈ، یونس خان قومی کرکٹ ٹیم کے بیٹنگ کوچ مقرر

دورہ انگلینڈ، یونس خان قومی کرکٹ ٹیم کے بیٹنگ کوچ مقرر

  

لاہور(سپورٹس رپورٹر) پاکستان کرکٹ بورڈ نے یونس خان کو دورہ انگلینڈ کے لئے پاکستان کا بیٹنگ کوچ مقرر کر دیا جبکہ مشتاق احمد سپن باؤلنگ کوچ کی حیثیت سے ہیڈ کوچ مصباح الحق اور باؤلنگ کوچ وقار یونس کے ہمراہ انگلینڈ روانہ ہوں گے۔ تین ٹیسٹ اور تین ٹی ٹونٹی انٹرنیشنل میچوں پر مشتمل سیریز اگست/ستمبر میں انگلینڈ میں کھیلی جائے گی۔ یہ فیصلہ ہیڈ کوچ مصباح الحق اور باؤلنگ کوچ وقار یونس کو ضروری اور اہم وسائل کی فراہمی کے لئے کیا گیا ہے جو انہیں ٹیم کی کارکردگی کو مزید بہتر بنانے میں مدد کرے گا۔دورہ انگلینڈ کے لیے اضافی کھلاڑیوں کو انگلینڈ بھیجا جا رہا ہے لہٰذا ضروری ہے کہ ان کھلاڑیوں کی تربیت کے لئے بہترین کوچز تعینات کیے جائیں تاکہ نوجوان کرکٹرز کے کھیل میں نکھار آسکے یونس خا ن نے اپنی تعیناتی پرخوشی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ پی سی بی نے ان کو جو ذمہ داری دی ہے وہ اس پر پورا اترنے کی کوشش کریں گے اور امید ہے کہ تمام کھلاڑی بھی میرے ساتھ تعاون کریں گے دورہ انگلینڈ پاکستان کے لئے آسان نہیں بیٹسمینوں کی بہتر تربیت میری اولین ترجیح ہوگی۔ یونس خان نے 2000ء سے 2017ء تک محیط اپنے ٹیسٹ کیرئیر میں 118 میچوں میں 52 سے زائد کی اوسط کے ساتھ 10ہزار 99 رنز بنائے۔ سری لنکا کے خلاف کراچی میں 313 رنز کی اننگز ان کے کیرئیر کی بہترین اننگز تھی جس کی بدولت انہیں آئی سی سی رینکنگ میں پہلی پوزیشن ملی۔ انگلینڈ کے خلاف یونس خان کا ریکارڈ خاصا متاثر کن ہے۔ انگلینڈ میں کھیلے جانے والے 9 ٹیسٹ میچوں کی 16 اننگز میں یونس خان نے 50 سے زائد کی اوسط کے ساتھ 810 رنز بنائے۔ اس دوران انہوں نے 2 سنچریاں (اوول 2016ء میں 218 اور ہیڈنگلے 2006ء میں 173 رنز کی اننگز) اور 3 نصف سنچریاں بنائیں۔ حریف ٹیم کے خلاف پاکستان میں کھیلے گئے 2 اور متحدہ عرب امارات میں کھیلے گئے 6 ٹیسٹ میچوں میں انہوں نے مشترکہ طور پر 616 رنز بنائے۔ چیمپئن بلے باز نے یہاں 2 سنچریاں (دبئی میں 127 اور 118 رنز کی اننگز) اور 1 نصف سنچری بنائی۔ پاکستان کرکٹ بورڈ کے چیف ایگزیکٹیو وسیم خان نے کہا ہے کہ مجھے خوشی ہے کہ یونس خان جیسے قد آور اور شاندار بیٹنگ ریکارڈ کے حامل کرکٹر نے اس اہم دورے کے لیے پاکستان کرکٹ کے ساتھ کام کرنے پر رضامندی ظاہر کی ہے۔ وسیم خان نے کہا کہ انہوں نے جب اس حوالے سے یونس خان سے رابطہ کیا تو ان کا اس عہدے کے ذریعے ملک کی خدمت کرنے کا جوش اور جذبہ قابل دید تھا۔ وسیم خان نے کہا یہ سمجھنا بہت ضروری ہے کہ آئندہ سیریز کے لیے مصباح الحق، وقار یونس، یونس خان اور مشتاق احمد کی موجودگی کھلاڑیوں کے لیے انگلینڈ کی کنڈیشنز سے واقفیت میں اہم کردار ادا کرے گی قومی کرکٹ ٹیم کے سلیکٹر اور ہیڈ کوچ مصباح الحق نے کہا کہ وہ یونس خان کو خوش آمدید کہتے ہیں اور وہ ایک بار پھر ان کے ہمراہ پاکستان کی کرکٹ کے رنگوں میں ڈھلنے کے منتظر ہیں۔

نہوں نے کہا کہ بطور کرکٹرز ہم دونوں کھلاڑیوں کے کیرئیرز ایک ساتھ ہی جاری رہے۔

مزید :

کھیل اور کھلاڑی -