عوا، پٹرول کی خاطر مسلسل خوار، آٹا دکانوں سے غائب، چکیوں پر دستیا ب

    عوا، پٹرول کی خاطر مسلسل خوار، آٹا دکانوں سے غائب، چکیوں پر دستیا ب

  

لاہور(لیڈی رپورٹر)شہر میں پٹرول کی قلت مسلسل برقرار،شہری دسویں روز بھی سڑکوں پر خوار،شدید گرمی میں پی ایس او کے پٹرول پمپوں پر موٹر سائیکلوں اور گاڑیوں کی لمبی قطاریں دیکھنے میں آئی۔پٹرول کی قلت کے علاوہ آٹا بحران نے پھرسر اٹھا لیا، پرچون سطح پر آٹا نایاب ہو گیا جبکہ چکیوں پر من مانی قیمتوں پر آٹا فروخت ہونے لگا۔سبزیوں اور پھلوں کی قیمتوں میں بھی اضافہ ریکارڈ کیا گیا ہے۔تفصیلات کے مطابق شہر بھر میں پٹرول کی قلت دور نہ ہوسکی۔ 10 ویں روز بھی شہری پٹرول کے حصول کے لئے خوار ہوتے رہے ہیں۔۔ نجی آئل مارکیٹنگ کمپنیوں کے آئل ڈپوز سے سپلائی بحال نہ ہو سکی۔شہریوں کا کہنا ہے کہ کبھی چینی اور آٹے کی لائنوں میں لگنا پڑتا ہے۔ اب پٹرول کیلئے بھی لائن میں لگنے پر مجبور ہیں جبکہ چکی مالکان نے بھی آٹے کی قیمت میں اضافہ کر دیا ہے۔آٹا 66 روپے فی کلو فروخت ہونے لگا۔سبزیوں اور پھلوں کی قیمتوں میں اچانک اضافے سے صارفین کا پارہ چڑھا دیا۔ تفصیلات کے مطا بق لاہور میں آٹا مہنگا ہو گیا۔ فلور ملز کے آٹے کی قلت اور من مانی قیمت پر فروخت جاری ہے۔ چکی آٹا تین روپے کلو کی اضافی قیمت کے ساتھ بیچا جا رہا۔ عوام مہنگائی کی چکی میں پسنے لگے۔آٹا بحران نے ایک بار پھر عوام کو جکڑ لیا۔ کہیں قلت اور کہیں من مانی قیمت پر فروخت جاری ہے۔ شہر میں چکی آٹے کی قیمت 66 روپے کلو تک ہو گئی ہے جبکہ چکی مالکان کا کہنا ہے کہ گندم 2 ہزار روپے من میں دستیاب ہونے کے باعث آٹا مہنگا ہوا ہے۔ چکی آٹا دستیاب تو ہے لیکن فلور ملز کا 20 کلو آٹے کے تھیلے کی قلت ہے۔ جہاں پر آٹا دستیاب ہے وہاں دکاندار من مانی قیمت وصول کر رہے ہیں۔ ادھرسرکاری ریٹ لسٹ میں پانچ سبزیاں اور دو پھلوں کی قیمتیں بڑھ گئیں، پیاز 27 کے بجائے 50 روپے، ٹماٹر 18 کے بجائے 40 روپے فی کلو میں فروخت ہو رہا ہے۔ لیموں 10 روپے کلو مہنگا ہو گیا ہے جس کے بعد سرکاری قیمت 115 روپے کلو مقرر کی گئی ہے لیکن مارکیٹ میں 140 روپے کلو میں بیچا جا رہا ہے۔اسی طرح دیسی کھیرا 3 روپے، میتھی 5 روپے، گھیا توری 5 روپے اور چائنہ گاجر کی قیمت میں 3 روپے کا اضافہ ہوا ہے۔ پھلوں میں سیب کالا کلو درجہ اول 250 کے بجائے 350 روپے کلو میں بیچا جا رہا ہے۔ خوبانی سفید درجہ اول کی قیمت میں 10 روپے کا اضافہ ہوا ہے جو اب 125 کے بجائے 175 روپے کلو میں دستیاب ہے۔ آم چونسہ 145 کے بجائے 180 روپے کیلا درجہ اول 165 کے بجائے 200 روپے فی درجن میں فروخت ہو رہا ہے۔

مزید :

صفحہ اول -