ملازمت سے فارغ کرنے کے حکومتی منصوبے کیخلاف سٹیل ملز ملازمین عدالت پہنچ گئے

    ملازمت سے فارغ کرنے کے حکومتی منصوبے کیخلاف سٹیل ملز ملازمین عدالت پہنچ ...

  

کراچی(سٹاف رپورٹر، مانیٹرنگ ڈیسک، نیوز ایجنسیاں) پاکستان سٹیل ملزکے ملازمین نے گولڈن ہینڈ شیک کے ذریعے ملازمت سے فارغ کرنے کے وفاقی حکومت کے منصوبے کیخلاف خلاف سندھ ہائیکورٹ پہنچ گئے۔پاکستان اسٹیل کے 9350 ملازمین نے سندھ ہائیکورٹ میں درخواست دائر کردی جس میں کہا گیا ہے کہ سپریم کورٹ نے 2006 میں پاکستان اسٹیل کی نجکاری کے لیے اصول وضع کیے تھے۔ملازمین کی جانب سے درخواست کی فوری سماعت کی بھی استدعا کی گئی جسے عدالت نے منظور کرلی۔اسٹیل مل ملازمین کی درخواست پر عدالت عالیہ کا 2 رکنی بینچ پیر کو سماعت کرے گا۔خیال رہے کہ گزشتہ دنوں اقتصادی رابطہ کمیٹی (ای سی سی) نے پاکستان اسٹیل مل کے تقریباً 9100 ملازمین کو گولڈن ہینڈ شیک دینے کی اصولی منظوری دی تھی۔اجلاس میں ای سی سی نے فیصلہ کیا کہ گولڈن ہینڈشیک لینے والے ملازمین کو تمام واجبات فوری ادا کیے جائیں گے۔وفاقی وزیر برائے صنعت و پیداوار حماد اظہر کا کہنا ہے کہ اسٹیل مل ملازمین کو پیکج کے تحت اوسطاً 23 لاکھ فی ملازم ملیں گے۔دوسری جانب حکومت میں آنے سے پہلے عمران خان سمیت اسد عمر اسٹیل مل کی نجکاری کی مخالفت اور اس کی بحالی پر زور دیتے رہے ہیں۔

سٹیل ملز

مزید :

صفحہ اول -