پارک لین ریفرنس:عدالت کا آصف زرداری پر 7 جولائی کی بجائے 26 جون کو فردجرم عائد کرنے کافیصلہ

پارک لین ریفرنس:عدالت کا آصف زرداری پر 7 جولائی کی بجائے 26 جون کو فردجرم عائد ...
پارک لین ریفرنس:عدالت کا آصف زرداری پر 7 جولائی کی بجائے 26 جون کو فردجرم عائد کرنے کافیصلہ

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)احتساب عدالت نے پارک لین ریفرنس میں آصف زرداری پر 7 جولائی کی بجائے 26 جون کو فردجرم عائد کرنے کافیصلہ کیا ہے جبکہ منی لانڈرنگ کیس کی سماعت7 جولائی کو ہی ہو گی ۔

تفصیلات کے مطابق احتساب عدالت میں جعلی اکاﺅنٹس اور منی لانڈرنگ کیس کی سماعت ہوئی،نیب نے موقف اختیار کیاکہ ریفرنس کی کاپیاں جمع کرادیں، لہٰذاعدالت ملزمان پرفردجرم عائدکرے،نیب نے کہاکہ انورمجیدکے ویڈیوبیان کے حوالے سے انتظامات مکمل کرلیے۔

وکیل آصف زرداری نے کہاکہ عمررسیدہ لوگ کورونا کا زیادہ شکارہوسکتے ہیں،آصف زرداری،فریال تالپورکی عمریں بھی 60 سال سے زائدہیں۔جج احتساب عدالت نے کہاکہ جوملزمان نہیں آسکتے ان کاویڈیوبیان ریکارڈکرلیتے ہیں،عدالت نے آصف زرداری اورفریال تالپورکی عدم حاضری پر فرد جرم موخر کردی گئی اور ان کی آج حاضری سے استثنیٰ کی درخواست منظور کرتے ہوئے سماعت 7 جولائی تک ملتوی کردی۔

تاہم نیب نے پارک لین کیس میں آصف زرداری پر فردجرم جلد عائد کرنے کی درخواست کرتے ہوئے کہاکہ پارک لین کیس میں تمام تقاضے پورے ہو چکے ہیں ،فردجرم کی تاریخ جلد مقرر کی جائے تاکہ ٹرائل آگے بڑھ سکے ،نیب کی درخواست پر پارک لین ریفرنس کیس کی تاریخ میں تبدیلی کردی ،عدالت نے پارک لین کیس میں آصف زرداری اور دیگر پر فردجرم کیلئے 26 جون کی تاریخ مقررکردی جبکہ منی لانڈرنگ کیس کی سماعت7 جولائی کو ہی ہو گی ۔

مزید :

قومی -علاقائی -اسلام آباد -