قومی ٹیم کیساتھ 4 کوچز ہونے کا معاملہ، سپن باﺅلنگ کوچ مشتاق احمد میدان میں آ گئے

قومی ٹیم کیساتھ 4 کوچز ہونے کا معاملہ، سپن باﺅلنگ کوچ مشتاق احمد میدان میں آ ...
قومی ٹیم کیساتھ 4 کوچز ہونے کا معاملہ، سپن باﺅلنگ کوچ مشتاق احمد میدان میں آ گئے

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) قومی کرکٹ ٹیم کے سپن باؤلنگ کوچ مشتاق احمد نے کہا ہے کہ 4 تجربہ کار کوچز کے ایک ساتھ ہونے سے بہت فائدہ ہوگا اور میری کوشش ہو گی کہ اپنا کردار بہترین طریقے سے نبھاﺅں۔

تفصیلات کے مطابق ویڈیو کانفرنس میں قومی ٹیم کے سپن باؤلنگ کوچ نے کہا کہ یونس خان، میرے، مصباح اور وقار یونس کیلئے مددگار ثابت ہوں گے، وہ ایک زبردست انسان ہیں اور ان کیساتھ ہمیشہ بہترین تعلق رہا ہے۔

مشتاق احمد کا کہنا تھا کہ میں نے انگلینڈ میں 11 سال کاؤنٹی کرکٹ کھیلی، 6 سال ٹیم کی کوچنگ کی، اب پی سی بی کے ساتھ کنسلٹنٹ کی حیثیت سے کام کر رہا تھا، اب کوشش ہوگی کہ اپنا کردار بہترین طریقے سے نبھاﺅں۔

باؤلنگ کوچ نے کہا کہ میں اپنے تجربے کی روشنی میں کھلاڑیوں کی بہترین تربیت کی کوشش کروں گا، کورونا صورت حال میں اب ذہنی دباؤکو برداشت کرنے کا کھیل آ گیا ہے، انگلینڈ اور ویسٹ انڈیز کے درمیان سیریز سے کافی فائدہ ہوگا۔

گیند کو تھوک سے چمکانے پر پابندی سے متعلق انہوں نے کہا کہ نئے قانون سے شناسائی کیلئے ابھی کافی وقت ہے، ہم پہلے ہی کھلاڑیوں کو ذہنی طور پر تیار کر رہے ہیں، انگلینڈ کے خلاف سیریز کوچز کیلئے بھی سخت ہوگی۔انہوں نے کہا ٹیم میں فاسٹ باؤلر ہیں لیکن سپنر ہمیشہ اہمیت کے حامل رہے ہیں، یاسر شاہ تجربہ کار ہیں ان کے ساتھ کام بھی کر رہا ہوں۔

خیال رہے کہ پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) نے دورہ انگلینڈ کے لیے یونس خان کو قومی کرکٹ ٹیم کا بیٹنگ کوچ مقرر کیا ہے، مصباح الحق قومی کرکٹ ٹیم کے ہیڈ کوچ اور چیف سلیکٹر ہیں۔

مزید :

کھیل -