”کورونا وائرس سے ڈرنے کی بجائے اللہ سے ڈریں اور۔۔۔“ چوہدری شجاعت حسین نے ایسی بات کہہ دی کہ ہر پاکستانی سوچ میں پڑ جائے

”کورونا وائرس سے ڈرنے کی بجائے اللہ سے ڈریں اور۔۔۔“ چوہدری شجاعت حسین نے ...
”کورونا وائرس سے ڈرنے کی بجائے اللہ سے ڈریں اور۔۔۔“ چوہدری شجاعت حسین نے ایسی بات کہہ دی کہ ہر پاکستانی سوچ میں پڑ جائے

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) پاکستان مسلم لیگ (ق) کے صدر اور سابق وزیراعظم چودھری شجاعت حسین نے کہا ہے کہ کورونا وائرس سے ڈرنے کی بجائے اللہ سے ڈریں کیونکہ دوا کیساتھ ساتھ دعا کا ہونا بہت ضروری ہے، جب اللہ راضی ہوتا ہے تب ہی معجزات ہوتے ہیں، اس کی مثال میری اپنی زندگی ہے۔

تفصیلات کے مطابق چوہدری شجاعت حسین نے کہا کہ میرا ایمان ہے کہ اللہ راضی ہے تو سب کچھ ٹھیک ہو جاتا ہے، مزدوری کرنے والوں، اپنے ملازمین اور اردگرد غریب اور مستحق لوگوں کو ڈھونڈیں اور ان کو کھانا دیا کریں، جب اللہ راضی ہوتا ہے تب ہی معجزات ہوتے ہیں، اس کی مثال میری اپنی زندگی ہے، میرے اور تمام لوگوں کیلئے یہ واقعی لمحہ فکریہ ہے، کورونا وائرس سے ڈرنے کی بجائے اللہ سے ڈریں۔

چوہدری شجاعت حسین کا کہنا تھا کہ اس وباءسے بچنے کیلئے اللہ کو راضی کریں اور حضور ﷺ کے بتائے ہوئے طریقے پر اپنی زندگی گزاریں۔ میں بار بار سب کو یہی تاکید کر رہا ہوں کہ یہ وائرس اللہ تعالیٰ کی طرف سے وارننگ ہے۔ ہم سب کو اپنے گریبان میں جھانک کر اپنی غلطیوں کا احساس کر کے اللہ تعالیٰ سے معافی مانگنی چاہئے۔

انہوں نے کہا کہ یہ سمجھنے کی بات ہے کہ پوری دنیا میں طاقت کا معیار بدل چکا ہے، ایٹم بم اور میزائل اس وائرس کو نہیں مار سکتے اور طاقتور ہونے کے دعوے دھرے کے دھرے رہ چکے ہیں۔ میرا اس بات پر یقین اور پختہ ہو گیا ہے کہ دوا کیساتھ ساتھ دعا کا ہونا بہت ضروری ہے، اگر اللہ راضی ہے تو سب کچھ ٹھیک ہو جاتا ہے۔

مزید :

قومی -