ایران نے امریکہ کیلئے جاسوسی کرنیوالے شخص کو عبرتناک سزا سنادی، اس کا جنرل قاسم سلیمانی کی ہلاکت سے کیا تعلق تھا؟

ایران نے امریکہ کیلئے جاسوسی کرنیوالے شخص کو عبرتناک سزا سنادی، اس کا جنرل ...
ایران نے امریکہ کیلئے جاسوسی کرنیوالے شخص کو عبرتناک سزا سنادی، اس کا جنرل قاسم سلیمانی کی ہلاکت سے کیا تعلق تھا؟

  

تہران(مانیٹرنگ ڈیسک) امریکی فوج نے چند ماہ قبل عراق میں ڈرون حملہ کرکے ایرانی جنرل قاسم سلیمانی کو قتل کر دیا تھا۔ ایران نے اب امریکہ اور اسرائیل کو جنرل قاسم سلیمانی کے متعلق مخبری کرنے والے زیرحراست جاسوس محمود موسوی ماجد کو سزائے موت سنا دی گئی ہے۔ عرب نیوز کے مطابق ایرانی حکام کی طرف سے گزشتہ روز بتایا گیا ہے کہ اس شخص کے خلاف ثابت ہو گیا ہے کہ اس نے امریکی اور اسرائیلی خفیہ ایجنسیوں کو جنرل قاسم سلیمانی کے متعلق مخبری کی، جس کی بنیاد پر امریکی فوج نے ڈرون حملہ کیا۔ بیان کے مطابق اس شخص کو سزائے موت سنا دی گئی ہے۔

ایرانی عدلیہ کے ترجمان غلام حسین اسماعیلی نے اس حوالے سے ایک پریس کانفرنس کی جس میں انہوں نے بتایا کہ” محمود موسوی ماجد ان جاسوسوں میں سے ایک تھا جنہوں نے سی آئی اے اور موساد کو شہید سلیمانی کے متعلق مخبری کی۔ اس نے ہمارے دشمن کو بتایا کہ ہمارا جنرل کب اور کہاں پہنچ رہا ہے۔ اس جاسوس کو سزائے موت سنا دی گئی ہے، جس پر جلد عملدرآمد کیا جائے گا۔“تاہم اس کے کچھ دیر بعد ایرانی حکام کی طرف سے ایک اور بیان جاری کیا گیا جس میں بتایا گیا کہ اس جاسوس کا جنرل سلیمانی کے قتل کی واردات سے کوئی تعلق نہیں تھا۔ اسے اکتوبر 2018ءمیں گرفتار کیا گیا تھا اور جنرل قاسم کے قتل سے پہلے اس کے خلاف مقدمے کی کارروائی مکمل ہو چکی تھی۔ اس پر پاسداران انقلاب کے اہم ترین راز سی آئی اے اور موساد کو فراہم کرنے کا الزام تھا۔

مزید :

بین الاقوامی -