ویکسی نیشن سنٹرمیں لگی سکرین پر اچانک ’خواتین کی ہم جنس پرستی‘ پر مبنی فحش فلم چلنی شروع ہو گئی

ویکسی نیشن سنٹرمیں لگی سکرین پر اچانک ’خواتین کی ہم جنس پرستی‘ پر مبنی فحش ...
ویکسی نیشن سنٹرمیں لگی سکرین پر اچانک ’خواتین کی ہم جنس پرستی‘ پر مبنی فحش فلم چلنی شروع ہو گئی

  

سین جوز(مانیٹرنگ ڈیسک) وسطی امریکہ کے ملک کوسٹا ریکا میں ایک کورونا ویکسی نیشن سنٹر لوگ ویکسین لگوانے کے لیے انتظار گاہ میں تھے جہاں لگے ٹیلی ویژن پر کورونا وائرس ہی سے متعلق معلومات دی جا رہی تھیں تاہم اچانک ٹی وی پر ایسا مواد چلنا شروع ہو گیا کہ وہاں بیٹھے ہر شخص کا چہرہ شرم سے لال ہو گیا۔

 ڈیلی سٹار کے مطابق یہ واقعہ دارالحکومت سین جوز کے ایک ویکسی نیشن سنٹر میں پیش آیا جہاں ٹی وی پر اچانک ’خواتین کی ہم جنس پرستی‘ پر مبنی فحش فلم چلنی شروع ہو گئی۔ٹی وی پر فحش فلم چلتی دیکھ کر سنٹر پر کام کرنے والے سٹاف کے ہاتھوں کے طوطے اڑ گئے تاہم وہاں ویکسین کے لیے آئے ہوئے درجنوں مردوخواتین ایک طرف شرم سے منہ چھپانے لگے اور دوسری طرف ان کے لیے ہنسی روکنا مشکل ہو گیا۔ 

ٹی وی پر فحش فلم چلنے پر سٹاف کے لوگ ریموٹ کنٹرول لے کر دوڑتے ہوئے آئے اور جلدی سے چینل تبدیل کر دیا۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -