11سال قبل لاپتہ ہونیوالی لڑکی گھر کے قریب سے ہی برآمدلیکن اتنا عرصہ کیوں چھپی رہی؟ جان کر سمجھ نہ آئے کہ ہنسیں یا روئیں

11سال قبل لاپتہ ہونیوالی لڑکی گھر کے قریب سے ہی برآمدلیکن اتنا عرصہ کیوں چھپی ...
11سال قبل لاپتہ ہونیوالی لڑکی گھر کے قریب سے ہی برآمدلیکن اتنا عرصہ کیوں چھپی رہی؟ جان کر سمجھ نہ آئے کہ ہنسیں یا روئیں

  

نئی دہلی(مانیٹرنگ ڈیسک) بھارت میں 11سال قبل لاپتہ ہونے والی لڑکی اتنے عرصے بعد بالآخر ایسی جگہ سے برآمد ہو گئی کہ سن کر یقین کرنا مشکل ہو جائے۔ خلیج ٹائمز کے مطابق اس سجیتھا نامی لڑکی کا تعلق بھارتی ریاست کیرالہ کے شہر پلکید کے نواحی گاﺅں ایالور سے ہے۔ 11سال قبل اس کی عمر 18سال تھی جب وہ ایک روز اچانک لاپتہ ہو گئی۔ والدین نے سالہا سال تک اسے تلاش کیا، پولیس نے بھی اپنی سی کوشش کی مگر اس کا کبھی کوئی سراغ نہیں مل سکا۔

گزشتہ دنوں سجیتھا اپنے ماں باپ کے گھر سے محض 500میٹر کے فاصلے پر ایک گھر سے برآمد ہو گئی، جس پر انکشاف ہوا کہ وہ گیارہ سال قبل اپنے اس آشنا کے ساتھ بھاگ نکلی تھی اور آدھ کلومیٹر دور اس کے گھر میں چھپ کر رہنا شروع کر دیا تھا۔ اس نوجوان کا نام النچھوواٹل رحمان ہے جو پیشے کے اعتبار سے بڑھئی ہے۔ لڑکی 11سال تک اس کے چھوٹے سے گھر میں ہی رہتی رہی اور کبھی کسی کو کانوں کان خبر نہ ہو سکی کہ لاپتہ ہونے والی سجیتھا اسی علاقے میں رہائش پذیر ہے۔

رپورٹ کے مطابق رحمان کا بڑا بھائی بشیر گزشتہ دنوں اس کے گھر گیا اور اس نے وہاں سجیتھا کو دیکھ لیا اور پولیس کو اطلاع دے دی۔ پولیس نے سجیتھا اور رحمان کو گرفتار کرکے عدالت میں پیش کیا جہاں سجیتھا نے رحمان کے ساتھ رہنے کی استدعا کی جسے عدالت نے منظور کر لیا اور اسے رحمان ہی کے ساتھ بھیج دیا۔ 

پولیس آفیسر دیپا کمار نے بتایا کہ ”لڑکی اور لڑکا الگ الگ مذاہب سے تعلق رکھتے تھے جس کی وجہ سے انہوں نے اپنے تعلق کو دنیا سے چھپا کر رکھا۔ وہ جانتے تھے کہ اگر دنیا کو پتا چلا تو وہ کبھی ایک نہیں ہو سکیں گے۔ سجیتھا اس سارے عرصے میں زیادہ گھر گھر کے ایک چھوٹے سے کمرے میں بند رہی۔ اس کمرے کو رحمان باہر سے تالا لگائے رکھتا تھا اور کسی کو اس کے قریب بھی نہیں جانے دیتا تھا۔ وہ کسی کے کمرے کی طرف جانے پر انتہائی غصے کا اظہار کرتا جس پر لوگ اس کی دماغی صحت پر شک کرتے تھے۔ تاہم یہ کسی کے وہم و گمان میں بھی نہیں تھا کہ اس کمرے میں اس نے سالہا سال سے ایک لڑکی کو چھپا کر رکھا ہوا ہے۔اس کمرے کے عقب میں ٹوائلٹ تھا۔ رحمان نے اس کمرے کی کھڑکی کی کچھ سلاخیں توڑ دی تھیں جہاں سے سجیتھا رات کے وقت نکل کر ٹوائلٹ جاتی تھی۔“

مزید :

ڈیلی بائیٹس -