اگر کلبھو شن یادیوکو این آر او دینا تھا تو آرڈیننس کیوں لائے ؟ قومی اسمبلی میں بلاول بھٹو کا خطاب 

اگر کلبھو شن یادیوکو این آر او دینا تھا تو آرڈیننس کیوں لائے ؟ قومی اسمبلی ...
اگر کلبھو شن یادیوکو این آر او دینا تھا تو آرڈیننس کیوں لائے ؟ قومی اسمبلی میں بلاول بھٹو کا خطاب 

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن )قومی اسمبلی نے بھارتی جاسوس کلبوشن جادھو کے معاملے پر عالمی عدالت انصاف کے فیصلے کو موثر بنانے کے لیے ’حق نظر ثانی کا بل آرڈیننس 2020‘منظور کرلیا ۔اس موقع پرچیئرمین پیپلز پارٹی بلاول بھٹو زرداری نے قومی اسمبلی میں خطاب کے دوران حکومت پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ آپ نے اگر کلبھوشن کو این آر او دینا تھا تو آرڈیننس کیوں لائے؟ آپ کشمیر کے وکیل بنتے تھے لیکن کلبھوشن کے وکیل نکلے۔ بلاول نے حکومتی ارکان سے کہا کہ اگر آپ ہمیں سنیں گے نہیں ، بولنے نہیں دیں گے اور بل پڑھنے تک نہ دیں گے تو یہ زیادتی ہوگی۔انہوں نے کہا کہ اوورسیز پاکستانیوں کو ووٹ کا حق دینا سب چاہتے ہیں ، اس کے لیے آپ کو ہمیں ساتھ لے کرچلنا ہوگا ، زبردستی بل پاس نہیں ہوسکتا ، اگر آپ ہم سے بات کریں تو ہم آپ کی معاونت کریں گے۔

مزید :

قومی -