فیصل آباد ،اہلسنت کے احتجاجی دھرنوں کے باعث ٹریفک کا نظام دن بھر ابتر رہا

فیصل آباد ،اہلسنت کے احتجاجی دھرنوں کے باعث ٹریفک کا نظام دن بھر ابتر رہا

 فیصل آباد(بیورورپورٹ)فیصل آباد میں گذشتہ روز تنظیمات اہلسنت کے احتجاجی دھرنوں کے باعث شہر بھر میں ٹریفک کا نظام دن بھر ابتر رہامختلف مقامات پر ان احتجاجی دھرنوں کی وجہ سے شہری اپنے اپنے علاقوں میں مقید ہو کر رہ گئے پولیس نے لوگوں کی آمدورفت کے لئے کوئی متبادل حکمت عملی اختیار نہ کی ایسا معلوم ہوتا تھا کہ فیصل آباد میں انتظامیہ مفلوج ہو کر رہ گئی ہے علماء کی گرفتاریوں اور درود وسلام پر پابندی کے خلاف سنی اتحاد کونسل سمیت 42تنظیمات اہلسنّت کا دھرنا ضلع کونسل چوک فیصل آباد میں جاری ہے۔چیئرمین سنی اتحاد کونسل صاحبزادہ حامد رضا اورتنظیمات اہل سنت فیصل آباد کے امیر سید ہدایت رسول شاہ دھرنے کی قیادت کررہے ہیں۔دھرنے میں اہلسنّت کی 42 تنظیمات شریک ہیں۔مظاہرین نے ٹائرز جلاکر کئی اہم روڈز بندکردیئے ۔مختلف قافلے مختلف علاقوں سے ضلع کونسل چوک پہنچے۔چیئرمین سنی اتحاد کونسل صاحبزادہ حامد رضا بڑے قافلے کی صورت میں جامعہ رضویہ سے ضلع کونسل چوک پہنچے ۔فیصل آباد یار سول ا للہ ﷺ کی صداؤں سے گونج اٹھا ۔ صاحبزادہ حامد رضا نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ہمارے مطالبات کی منظوری تک دھرنا جاری رہے گا۔ہم یہاں سے اٹھنے والے نہیں ہیں۔حکومت مسلسل اہل سنت کے ساتھ زیادتی کررہی ہے اور ہم ایسا نہیں ہونے دیں گے۔حکومت پنجاب صوبہ میں کالعدم تنظیموں کی سربراہی کررہی ہے۔ رانا ثناء اللہ کی سربراہی میں پر امن اور محب وطن اہل سنت علماء کرام کے ساتھ ظلم و زیادتی ہو رہی ہے۔آج کا دھرنا تحریک کا آغاز ہے اور اب یہ تحریک پورے پنجاب میں پھیلا دی جائے گی ۔ہمیں امن پسندی کی سزادی جارہی ہے۔حکومت درود والوں کے خلاف نہیں بارود والوں کے خلاف کاروائی کرے۔

مزید : علاقائی


loading...