حبس بے جا کی درخواست ،ہائیکورٹ نے 5بچوں کو ماں کے حوالے کر دیا

حبس بے جا کی درخواست ،ہائیکورٹ نے 5بچوں کو ماں کے حوالے کر دیا

لاہور(نامہ نگار خصوصی)لاہور ہائیکورٹ نے حبس بیجا کی درخواست میں 5بچوں کو باپ سے لے کر ماں کے حوالے کر دیا، عدالتی فیصلے اور قانون سے ناواقف کمسن بچوں نے والدہ کے ساتھ جانے سے انکار کردیااور رو رو کر آسمان سر پر اٹھا لیا ، بچے والد کے ساتھ جانے کے لئے ہاتھ جوڑ کر والدہ کی منتیں بھی کرتے رہے مگر ماں نہ مانی ۔مسٹر جسٹس قاضی امین الدین نے خاتون ناہید بی بی کی درخواست پر بچوں کی ان کے باپ شہزاد سے لے کر ماں کے حوالے کرنے کا حکم دیا، بچوں کی باپ سے جذباتی محبت کو مدنظر رکھتے ہوئے عدالت نے میاں بیوی کو صلح کا موقع بھی دیا مگر خاتون نے استدلال کیا کہ وہ اپنے شوہر کے ساتھ نہیں رہنا چاہتی ،بچے اس کے حوالے کئے جائیں، عدالت نے بچوں کو ماں کے حوالے کرنے کا فیصلہ سنایا ،6 سالہ بشری ، 5 سالہ مصباح ،گلناز ، نیہا اور احمد نے رو رو کر آسمان سر پر اٹھا لیا ، بچے اپنی ماں کے آگے ہاتھ جوڑ کر منتیں کرتے رہے کہ انہیں اپنے باپ کے ساتھ ہی رہنے دیا جائے ،اس جذباتی منظر کو دیکھ کر بچوں کے والد کے ساتھ ساتھ وہاں موجود کئی اجنبی بھی آبدیدہ ہوگئے تاہم عدالتی فیصلے کی روشنی میں خاتون ناہید اور اس کے رشتہ داران بچوں کواپنے ساتھ لے گئے ۔ بچے ماں کے حوالے

مزید : صفحہ آخر


loading...