انویسٹی گیشن پولیس خراب گاڑیاں مد عیوں سے ٹھیک کروانے پر مجبور

انویسٹی گیشن پولیس خراب گاڑیاں مد عیوں سے ٹھیک کروانے پر مجبور

لا ہور (شعیب بھٹی) پولیس کارپیئرنگ ڈیپارٹمنٹ اعلیٰ افسروں کی گا ڑیا ں ٹھیک کرنے میں مصروف جبکہ انو یسٹی گیشن پو لیس اپنی درجنوں گا ڑیاں مقد مات کے \" مد عیوں \"سے ٹھیک کروانے پر مجبور ہو گئی ۔ تفصیلات کے مطا بق صو با ئی دا ر الحکومت میں وا قع 85تھا نو ں کی انو یسٹی گیشن پو لیس کے پا س 176گا ڑیا ں موجود ہیں ،جن میں سے اکژیت مدعیوں کے ر حم وکر م سے رواں دواں ہیں ۔ پو لیس ذرائع کے مطا بق ریپئرنگ ڈیپارٹمنٹ صرف ڈ ی آ ئی جی ، ایس پیزاور ڈ ی ایس پیز سمیت سی آ ئی اے کی گا ڑ یا ں ٹھیک کرتا ہے جبکہ انو یسٹی گیشن پو لیس کے اہلکا رسرکاری گا ڑیاں مقد ما ت کے مد عیوں سے مبینہ طور پرٹھیک کروا تے ہیں ۔پولیس ذرا ئع کے مطابق انو یسٹی گیشن کی 147گاڑیوں میں سے ٖاکژیت پرانے ماڈل کی ہیں ،یہ امر قابل زکر ہے کہ پنجا ب پو لیس کو ملنے والے84ار ب روپے میں سے 4ارب روپے نئی گا ڑیو ں کی خر یداری اور پر ا نی گاڑ یو ں کی مرمت کیلئے د یا جا تا ہے ۔ اس حوالے سے ر پئیرنگ ڈ یپا رٹمنٹ کے انچا ر ج مقبول نے ’’پاکستان\"سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ افسروں کی گا ڑیوں سمیت انو یسٹی گیشن کی گا ڑیا ں بھی ٹھیک کی جاتی ہیں جبکہ گز شتہ ما ہ 14تھانوں کی گاڑیاں مرمت کی گئی ہیں جن میں ایس پیز ،ڈی ایس ڈ ایس پیز ودیگر کی گاڑیاں شامل تھیں ۔ انویسٹی گیشن پولیس

مزید : صفحہ آخر


loading...