آپ کے اور آئن سٹائن کے دماغ میں کیا فرق ہے؟دلچسپ اور حیرتٍ انگیز حقائق

آپ کے اور آئن سٹائن کے دماغ میں کیا فرق ہے؟دلچسپ اور حیرتٍ انگیز حقائق
 آپ کے اور آئن سٹائن کے دماغ میں کیا فرق ہے؟دلچسپ اور حیرتٍ انگیز حقائق

  


 نیویارک(نیوزڈیسک) آئن سٹائن کے بارے میں آپ نے بہت کچھ سن رکھا ہوگا اور آپ کو بتایا گیا ہے کہ آئن سٹائن نے اپنے دماغ کا عام انسانوں کی نسبت زیادہ استعمال کیا ہے لیکن آج ہم آپ کو بتاتے ہیں کہ آپ اور مشہور سائنسدان کے دماغ میں اصل میں فرق کیا ہے۔کہا جاتا ہے کہ آئن سٹائن کی موت کے آٹھ گھنٹے کے بعد اس کا دماغ نکا لیا گیاتھا۔جریدے ’Brain‘میں حال ہی میں شائع ہونے والی مقالے میں بتایا گیا ہے کہ دماغ کے اند ر ایک مخصوص حصہ ’کارٹیکس‘ہوتا ہے۔دماغ کے مختلف حصوں کو مختلف کام کرنے ہوتے ہیں اور دماغ کے مختلف حصے مل کرکام سر انجام دیتے ہیں۔دماغ کا ایک حصہ جسم کے مختلف حصوں کو کنٹرول کرنے ساتھ ہمیں اردگرد کی چیزیں دیکھنے میں مدد دیتا ہے۔دماغ کا ایک حصہ صرف سوچنے کے لئے کام سرانجام دیتا ہے اور ہم جتنا زیادہ اس کا استعما ل کریں اتنا ہی یہ مزید فعال ہوتا جاتا ہے۔اگر آپ کو آئن سٹائن جیسا سوچنا ہے تو آپ کو اپنے اس حصے کو زیادہ فعال کرنا ہے۔آئن سٹان وائلن بجایا کرتا تھا اور آپ بھی اگر چاہیں تو موسیقی کی کلاسز لے سکتے ہیں۔اسی طرح اگر مختلف گیندوں کو گھمائیں اور انہیں ہاتھوں میں اچھالیں تو یہ بھی آپ کے دماغ کو بہت تیز کرے گا۔گو کہ اس طرح آپ کا دماغ آئن سٹائن جیسا تو نہیں ہوجائے گا لیکن پھر بھی آپ کے دماغ کی کارکردگی بہتر ہوگی۔

مزید : صفحہ آخر


loading...