بہاولپور‘ کرپٹ مافیا کیخلاف فوری آپریشن کا حکم، اینٹی کرپشن ٹیمیں سرگرم

بہاولپور‘ کرپٹ مافیا کیخلاف فوری آپریشن کا حکم، اینٹی کرپشن ٹیمیں سرگرم

  



بہاول پور(بیورورپورٹ) ڈائریکٹر جنرل اینٹی کرپشن اسٹیبلشمنٹ پنجاب لاہورگوہر نفیس کی ہدایات پر ڈائریکٹر اینٹی کرپشن اسٹیبلشمنٹ بہاول پور نے کرپشن مکاؤ مہم تیز کرنے کا حکم دیدیا ان خیالات کا اظہار ڈائریکٹر انٹی کرپشن اسٹیبلشمنٹ بہاول پورنے محکمہ اینٹی کرپشن کے افسران کو کرپٹ مافیا کے خلاف فوری طور پرکارروائی کرنے کے احکامات جاری کرتے(بقیہ نمبر43صفحہ12پر)

ہوئے کیا۔ محکمہ اینٹی کرپشن اسٹیبلشمنٹ بہاول پور کے مقدمہ میں سرکاری ملازم کوجرم ثابت ہونے پر ایک سال قید کی سزا اور جرمانہ کا حکم دیا۔ تفصیلات کے مطابق تھانہ اینٹی کرپشن اسٹیبلشمنٹ ہیڈ کوارٹر بہاول پور میں مقدمہ نمبر53/2011 ملوث ملزمان کاپی کلرک سیشن کورٹ بہاول پور اکرام الحق اور ایک شخص رحیم بخش کے خلاف چالان اینٹی کرپشن عدالت میں بھجوایا گیا۔ سپیشل جج اینٹی کرپشن بہاول پور نے مقدمہ کا فیصلہ سناتے ہوئے ملوث ملزمان کو ایک ایک سال قید اور 20ہزار روپے جرمانہ عائد کیا۔ مذکورہ ملزمان کو موقع پر گرفتار کر کے سنٹرل جیل بہاول پور منتقل کر دیا گیا۔ اسسٹنٹ ڈائریکٹر انوسٹی گیشن اینٹی کرپشن رحیم یارخاں کلیم احمد نے مقدمہ نمبر78/1996 تھانہ اینٹی کرپشن رحیم یارخاں میں مطلوب اشتہاری ملزمہ مسماۃشفیق انور EST کو گرفتار کر لیا۔ مذکورہ اشتہاری ملزمہ عرصہ دراز سے روپوش تھی۔ اسی طرح سرکل آفیسر اینٹی کرپشن بہاول پور مجاہد حسین ملک نے مقدمہ نمبر31/2018 میں اینٹی کرپشن بہاول پورمیں ملوث ملزم وارث فاروق (ملازم ڈاکٹر ہسپتال ہیڈ راجکاں) کو گرفتار کر لیا۔ ملزم کو عدالت مجاز میں پیش کر کے جسمانی ریمانڈ حاصل کیا جائے گا۔ریجنل ڈائریکٹر انٹی کرپشن اسٹیبلشمنٹ بہاول پور نے کہا ہے کہ ڈائریکٹر جنرل انٹی کرپشن پنجاب کی زیرو ٹالرینس پالیسی کے تحت کرپٹ سرکاری ملازمین کے خلاف بھی احتساب کا عمل جاری رہے گا۔

سرگرم

مزید : ملتان صفحہ آخر