دی بینک آف پنجاب اور این آئی ایف ٹی کے درمیان معاہد ہ پر دستخط

دی بینک آف پنجاب اور این آئی ایف ٹی کے درمیان معاہد ہ پر دستخط

  



لاہور (خصوصی رپورٹ) پاکستان میں کیش لیس معیشت کے نظریے کو فروغ دینے اور ڈیجیٹل کامرس ادائیگیوں کو فعال کرنے کیلئے دی بینک آف پنجاب اور پاکستان کے سب سے بڑے پیمنٹ پروسسرنیشنل انسٹی ٹیوشنل فسلیٹیشن ٹیکنالوجیز(این آئی ایف ٹی) میں معاہدہ طے پا گیا اس معاہدے کی وجہ سے بی او پی صارفین کو ”این آئی ایف ٹی ایس ای پے“ کے پلیٹ فارم سے کام کرنے والے ہزاروں ڈیجیٹل مرچینٹس تک رسائی کے علاوہ ڈیجیٹل پے منٹ قبول کرنے والا وسیع کارپوریٹ پورٹ فولیو بھی دستیاب ہو گا۔این آئی ایف ٹی ایس ای پے پاکستان میں کسی بھی بینک اکاؤنٹ اور والٹ کے مابین ڈیجیٹل کامرس ادائیگیوں کا ذریعہ قائم کر رہا ہے اور صارفین کو اپنے اکاؤنٹس(سی اے ایس اے) یا والٹ کے ذریعے براہ راست ای کامرس ادائیگیا ں کرنے کا موقع فراہم کر رہا ہے۔بینک آف پنجاب اپنی 600 سے زائد برانچوں کے ذریعے 20 لاکھ سے زائد صارفین کو کارپوریٹ، ریٹیل اور کنزیومر بینکنگ کے شعبوں میں خدمات فراہم کرنے والا ساتواں بڑا کمرشل بینک ہے۔بینک آف پنجاب کی توجہ اپنے ریٹیل اور بزنس صارفین کو ڈیجیٹل ادائیگیاں کرنے کے لیے ڈیجیٹل چینل فراہم کرنے پر مرکوز ہے جبکہ حکومت پنجاب کو ڈیجیٹل حل فراہم کرنے میں سبقت حاصل ہے۔ معاہدے پر دستخط حیدر وہاب، سی ای او- این آئی ایف ٹی اور وقاص انیس، سربراہ ڈیجیٹل بینکنگ گروپ بی او پی نے دونوں اداروں کے ٹیم ممبروں کی موجودگی میں کئے۔تقریب میں امتیاز شیخ، سی آئی او -بینک آف پنجاب اور فواد عبدالقادر، سربراہ ڈیجیٹل فنانس سروس- این آئی ایف ٹی اور دنوں اداروں کے دیگر افراد بھی شامل ہوئے۔اس موقع پر حیدر وہاب نے کہا کہ بینک آف پنجاب کے ساتھ این آئی ایف ٹی ای پے خدمات کی فراہمی کے معاہدے سے ہمیں انتہائی خوشی ہے اس کی وجہ سے سینٹرل ریجن کی کمرشل اور حکومتی انٹیٹیز کے درمیان مضبوط تعلقات قائم ہوں گے اور ہم پر اعتماد ہیں این آئی ایف ٹی اور بی او پی کے درمیان ہونے والے اس اشتراک سے مالیاتی خدمات سیکٹر میں غیر روایتی اور مختلف طرز کے ڈیجیٹل استعمال میں اضافہ ہو گا۔ وقاص انیس نے اس معاہدے کوانڈسٹری میں ڈیجیٹل پے منٹ ایکو سسٹم کے مشترکہ مقصد کے حصول کیلئے نہایت معاون اور مفید قرار دیا۔

معاہدہ

مزید : صفحہ آخر