مولانا محمد احمد لدھیانوی کا بل کی علمی اور عوامی حمایت پر مجلس احرار اسلام سے اظہار تشکر

      مولانا محمد احمد لدھیانوی کا بل کی علمی اور عوامی حمایت پر مجلس احرار ...

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


لاہور (نمائندہ خصوصی)قائد اہلسنت مولانا محمداحمد لدھیانوی اور مجلس احرار اسلام پاکستان کے مرکزی نائب امیر عبداللطیف خالد چیمہ نے اس امر پر اتفاق کیا ہے کہ قومی اسمبلی میں متفقہ طور پر پاس ہونے والاتحفظ ناموس صحابہ و اہل بیت اورامہات المؤمنین کا بل اسلام کی نشاء ثانیہ کا آغاز ہو گا۔ مولانا محمد احمد لدھیانوی اور عبداللطیف خالد چیمہ نے چیچہ وطنی میں قاری محمد نعیم طارق کے فرزندان کی دعوت ولیمہ کے موقع پر باہمی ملاقات میں امید ظاہر کی کہ قومی اسمبلی سے پاس ہونے والا یہ بل سینٹ آف پاکستان سے بھی اسی طرح پاس ہوجائے گا۔ اس موقع پر مولانا اورنگزیب فاروقی، مولانا محمد معاویہ اعظم، مولانا ریحان فاروقی، قاضی عبدالقدیر اور کئی دیگر رہنماء  و حضرات بھی موجودتھے۔ 
مولانامحمد احمد لدھیانوی نے اس موقع پر پاس ہونے والے بل کی علمی اور عوامی حمایت پر مجلس احرار اسلام کا شکریہ ادا کیا اور کہا کہ یہ بل نبی کریمؐ کے اصحاب و اہل بیت اور امہات المؤمنین کے بارے میں بدزبانی کرنے سے روکنے کا بل ہے اس بل سے گالی گلوچ اور فرقہ واریت ختم ہوگی اور صحابہ و اہلبیت کے ترانے گائے جائیں گے۔ عبداللطیف خالد چیمہ نے کہا کہ توہین مذھب، توہین رسالت اور توہین صحابہ و اہل بیت کے خلاف قانون سازی کی راہ ہموار کرنا ہماراطرہء امتیاز ہے ہم دستوری و قانونی اور آئینی جد جہد پر یقین رکھتے ہیں اور اس بات کے داعی ہیں کہ ملک امن کا گہوارہ بن جائے۔ عبداللطیف خالد چیمہ نے کہا کہ اس مسئلہ پر ہوش مندی اور دانش مندی سے کام لیتے ہوئے لابنگ اور میڈیا کے محاذ پر سرگرم ہونے کی اشد ضرورت ہے۔ مولانا محمد احمد لدھیانوی اور عبداللطیف خالد چیمہ نے یہ بھی کہا کہ ہماری جد جہد قانون کے دائرے میں ہے اور ہم بدامنی کی مسلسل نفی کررہے ہیں۔ عبداللطیف خالد چیمہ نے کہا کہ امن تو آمنہ کی گود میں ہی ملے گااور ہم اس کے لیے کوشش کر رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ہم توحید و ختم نبوت اور اسوہء صحابہ کرام رضی اللہ عنہم اجمعین کی روشنی میں امت کے اجماعی عقائد کا تحفظ چاہتے ہیں ہم کسی سے کچھ چھیننا نہیں چاہتے بلکہ اپنے غصب شدہ حقوق کی بحالی و بازیابی چاہتے ہیں۔