حاملہ بہو کو ہسپتال لے جانے والی ساس کے ساتھ ہسپتال کے ڈلیوری روم میں اجتماعی زیادتی

حاملہ بہو کو ہسپتال لے جانے والی ساس کے ساتھ ہسپتال کے ڈلیوری روم میں اجتماعی ...
حاملہ بہو کو ہسپتال لے جانے والی ساس کے ساتھ ہسپتال کے ڈلیوری روم میں اجتماعی زیادتی

  

جے پور (ڈیلی پاکستان آن لائن) بھارتی ریاست راجستھان میں ایمبولینس ڈرائیور اور کمپاﺅنڈر نے ہسپتال کے ڈلیوری روم میں حاملہ بہو کو چیک اپ کیلئے لانے والی ساس کو اجتماعی زیادتی کانشانہ بنادالا۔

بھارتی میڈیا کے مطابق 7 مئی کی رات کو کٹھومر کے سرکاری ہسپتال میں خاتون کے ساتھ زیادتی کا واقعہ پیش آیا۔ پولیس کا کہنا ہے کہ واقعے کے 2 روز بعد متاثرہ خاتون نے پولیس سے رجوع کیا اور واقعے کی تفصیلات بتائیں۔ خاتون کا کہنا ہے کہ وہ زیادتی کے واقعے کے باعث خوفزدہ ہوگئی تھی اور اسی وجہ سے پولیس کے پاس پہلے شکایت درج نہیں کراپائی۔

ایف آئی آر کے مطابق ہسپتال سے چھٹی کیلئے ضروری کاغذات کا کہہ کر ایمبولینس ڈرائیور رام نواس گجر 40 سالہ خاتون کو ڈلیوری روم میں لے گیا ۔ خاتون جیسے ہی کمرے میں پہنچی تو ڈرائیور نے کمرے کا دروازہ بند کردیا اور کمپاﺅنڈر گرجا پرساد کے ساتھ مل کر خاتون کو دبوچ لیا۔ ملزمان نے خاتون کے منہ میں کپڑا ٹھونس کر اسے اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنایا۔واقعے کے بعد سے دونوں ملزمان فرار ہیں جنہیں تلاش کرنے کیلئے کارروائی شروع کردی گئی ہے۔

مزید : بین الاقوامی