کورونا تمبا کو نوشی کرنیوالے افراد کیلئے زیادہ خطرناک:عالمی ادارہ صحت

  کورونا تمبا کو نوشی کرنیوالے افراد کیلئے زیادہ خطرناک:عالمی ادارہ صحت

  

جنیوا(شِنہوا)عالمی ادارہ صحت نے کہاہے کہ تمباکو نوشی لوگوں کی کورونا وائرس کیخلاف حفاظت نہیں کرتی۔ اس کے برعکس، انفیکشن کا شکار سگریٹ نوش افراد کوشدید بیماری اور موت کا زیادہ خطرہ لاحق ہوتاہے۔ ڈبلیو ایچ اوکے کوویڈ19- ردعمل کے ہیلتھ ایمرجنسی پروگرام کی ٹیکنیکل سربراہ ماہر وبائی امراض ڈاکٹر ماریا وان کرخوو نے پریس کانفرنس میں بتایا کہ کچھ مطالعاتی جائزوں کے بارے میں میڈیا رپورٹس ہیں جن کا بغور جائزہ نہیں لیا گیا جن میں کہا گیا کہ کوویڈ19-کے ساتھ اسپتال میں داخل لوگوں میں سگریٹ نوشی کا رجحان دیکھا۔ان جائزوں کا مقصد اس بات کا تعین کرنا نہیں تھا کہ تمباکو نوشی کسی بھی شکل یا صورت میں محفوظ ہے یا نہیں اور یہ مطالعاتی جائزے یہ نہیں کہتے ہیں کہ تمباکو نوشی کوویڈ19-سے بچاو کرتی ہے۔ تمباکو کے نقصانات سے ہم بخوبی واقف ہیں ہر سال لاکھوں افراد تمباکو کے استعمال سے ہلاک ہو جاتے ہیں۔ کوویڈ 19-سانس کی بیماری ہے اور تمباکو نوشی پھیپھڑوں کو نقصان پہنچاتی ہے۔انہوں نے زور دیتے ہوئے کہا کہ ہم تمباکو نوشی کے نقصانات سے آگاہ ہیں اور ہم جانتے ہیں کہ تمباکو نوشی کرنے والے اگر کوویڈ19-سے متاثر ہو جاتے ہیں تو انہیں شدید بیماری اور موت کا خطرہ زیادہ ہوتا ہے۔

ڈبلیو ایچ او

مزید :

صفحہ آخر -