آن لائن کلاس کے دوران استانی ایسا شرمناک کام کرتے رنگے ہاتھوں پکڑی گئی کہ طالب علم بھی شرم سے پانی پانی ہوگئے

آن لائن کلاس کے دوران استانی ایسا شرمناک کام کرتے رنگے ہاتھوں پکڑی گئی کہ ...
آن لائن کلاس کے دوران استانی ایسا شرمناک کام کرتے رنگے ہاتھوں پکڑی گئی کہ طالب علم بھی شرم سے پانی پانی ہوگئے

  

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) کورونا وائرس کی وباءکے پیش نظر تعلیمی ادارے بند ہیں اور آن لائن کلاسز ہو رہی ہیں۔ امریکہ میں گزشتہ دنوں ایسی ہی ایک آن لائن کلاس میں خاتون ٹیچر ایسا شرمناک کام کرتے رنگے ہاتھوں پکڑی گئی کہ بیچارے طالب علم شرم سے پانی پانی ہو گئے۔

 ڈیلی سٹار کے مطابق اس 37سالہ ٹیچر کا نام امینڈا فلیچر ہے جو نیویارک کے کولمبیا سکینڈری سکول فار میتھس، سائنس اینڈ انجینئرنگ میں پڑھاتی ہے۔ وہ ایپلی کیشن زوم پر آن لائن کلاس لے رہی تھی کہ اس دوران اس کے پاس ایک مرد موجود تھا جس نے شرٹ نہیں پہن رکھی تھی اور ٹیچر اس مرد کے ساتھ فحش حرکات کر رہی تھی۔طالب علموں نے خاتون ٹیچر کی اس مرد کے ساتھ شرمناک حرکات کی ویڈیو بنا کر سوشل میڈیا پر پوسٹ کر دی جو آن کی آن میں وائرل ہو گئی۔

 اس واقعے پر نیویارک سٹی سکولز کے سپیشل کمشنر برائے انویسٹی گیشن کا کہنا ہے کہ طالب علم لائیو کلاس دیکھ رہے تھے جب انہوں نے اپنی ٹیچر کو ایک برہنہ مرد کے ساتھ دیکھا۔ وہ دونوں نوڈلز کھا رہے تھے تاہم اچانک ٹیچر نے اس مرد کے سینے پر بوس و کنار شروع کر دی۔

 رپورٹ کے مطابق ٹیچر نے اس واقعے پر وضاحت پیش کرنے اور انویسٹی گیٹرز کے سامنے پیش ہونے سے انکار کر دیا ہے۔جس پر اس کے خلاف ممکنہ طور پر قانونی کارروائی ہو سکتی ہے۔واضح رہے کہ فلیچر 2007ءسے ٹیچنگ کے پیشے سے وابستہ ہے۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -