خاتون کو قتل کرکے اس کی ٹانگ پکا کرپاستے کیساتھ کھانے والے آدم خور کی رہائی کے دن قریب آ گئے

 خاتون کو قتل کرکے اس کی ٹانگ پکا کرپاستے کیساتھ کھانے والے آدم خور کی رہائی ...
 خاتون کو قتل کرکے اس کی ٹانگ پکا کرپاستے کیساتھ کھانے والے آدم خور کی رہائی کے دن قریب آ گئے

  

لندن(مانیٹرنگ ڈیسک) برطانیہ میں ایک خاتون کو قتل کرکے اس کی ٹانگ پکا کر کھانے والے آدم خور کی رہائی کے دن قریب آ گئے۔ ڈیلی سٹار کے مطابق اس سفاک شخص کا نام ڈیوڈ ہارکر ہے جس نے 1998ءمیں جولی پیٹرسن نامی دو بچوں کی ماں کو پھندہ دے کر قتل کیا اور اس کی ایک ٹانگ سے گوشت کاٹ کر پکایا اور پاستے کے ساتھ کھا گیا۔

 سفاک شخص اپنے ہمسایوں کے سامنے شیخی بھی بگھارتا رہا کہ آج اس نے ایک عورت کو قتل کرکے اس کا گوشت کھایا ہے تاہم ہمسایوں نے اس کی بات کا اعتبار نہیں کیا۔لوگوں کو اس وقت اس کی بات کا یقین آیا جب چند دن بعد گھر سے کچھ فاصلے پر مقتولہ جولی کا دھڑ برآمد ہو گیا۔ ہارکر کو پولیس نے گرفتار کرکے ٹیسائیڈ کراﺅن کورٹ میں پیش کر دیا تھا جہاں سے اسے عمر قید کی سزا سنائی گئی تھی تاہم عدالت نے اپنے فیصلے میں لکھا تھا کہ اسے 14سال بعد پیرول پر رہائی دی جا سکتی ہے۔

 اب اسے 14سال سے زائد عرصہ گزر چکا ہے اور اس کی پیرول پر رہائی ممکن ہو گئی ہے جس پر جولی پیٹرسن کے بھائی مائیکل پیٹرسن کا کہنا ہے کہ اس سفاک شخص کو اس وقت تک جیل سے باہر نہیں آنا چاہیے جب تک اس کی زندگی ختم نہ ہو جائے۔ 

مزید :

ڈیلی بائیٹس -