جنسی ہراساں کرنیوالے اوباشوں کے گروہ نے ٹرین سٹیشن پر کھڑی لڑکی کو نیچے پٹڑی پر گرادیا اورپھر۔ ۔ ۔

جنسی ہراساں کرنیوالے اوباشوں کے گروہ نے ٹرین سٹیشن پر کھڑی لڑکی کو نیچے پٹڑی ...
جنسی ہراساں کرنیوالے اوباشوں کے گروہ نے ٹرین سٹیشن پر کھڑی لڑکی کو نیچے پٹڑی پر گرادیا اورپھر۔ ۔ ۔

  

ڈبلن(مانیٹرنگ ڈیسک) آئرلینڈ میں ایک ٹرین سٹیشن پر کھلے عام لڑکیوں کو جنسی ہراسگی کا نشانہ بنانے والے اوباشوں کے ایک گروپ نے لڑکی کوسٹیشن پر کھڑی ٹرین کے نیچے پٹڑی پر گرا دیا۔ ڈیلی سٹار کے مطابق یہ ہولناک واقعہ آئرلینڈ کے دارالحکومت ڈبلن کے ہوتھ جنکشن ٹرین سٹیشن پر پیش آیا ہے جہاں اوباشوں کا ایک گروہ پلیٹ فارم پر کھڑا ہوتا ہے اور لڑکیوں کے ساتھ دست درازی کر رہا ہوتا ہے۔ 

منظرعام پر آنے والی سی سی ٹی وی فوٹیج میں دیکھا جا سکتا ہے کہ اس گروہ کے بدطینت مرد پہلے بھی کئی لڑکیوں کو چھوتے اور دھکے دیتے ہیں۔ بالآخر وہ اس کم عمر لڑکی کو دھکا دے کر ٹریک پر گرا دیتے ہیں۔ اس لڑکی کی عمر 17سال بتائی گئی ہے جو اوندھے منہ گرتی ہے اور لڑھک کر پلیٹ فارم اور ٹرین کے درمیان خالی جگہ سے نیچے ٹریک پر جا گرتی ہے۔ یہ معاملہ دیکھ کر ریلوے سٹاف اور مسافر دوڑ پڑتے ہیں اور بمشکل لڑکی کو کھینچ کر باہر نکالتے ہیں۔ خوش قسمتی سے اس دوران ٹرین حرکت میں نہیں آتی۔ پولیس کی طرف سے جاری ایک بیان میں بتایا گیا ہے کہ وہ اس واقعے کی تحقیقات کر رہے ہیں۔

مزید :

بین الاقوامی -