کچن گارڈننگ پروگرام کی کامیابی :صحت مند معاشرے کی تشکیل

کچن گارڈننگ پروگرام کی کامیابی :صحت مند معاشرے کی تشکیل

  

                            وزیر اعلیٰ پنجاب میاں محمد شہباز شریف کی ہدایت پر صوبے میں زہروں کے اثرات سے پاک سبزیوں کی گھریلو پیمانے پر کاشت اور پیداوار کی دستیابی کو یقینی بنانے کے لئے کچن گارڈننگ کے منصوبے کا آغاز کیا گیا ہے۔ اس منصوبے کے تحت 2011-12ءسے اب تک لاکھوں کی تعداد میں سبزیوں کے بیجوں کے پیکٹس تقسیم کئے جا چکے ہیں۔ان اقدامات کے نتیجے میں گھریلو پیمانے پر سبزیاں کاشت کرنے کے رجحان کو فروغ حاصل ہوا ہے اور عوام کو اس اہم منصوبے کی افادیت سے آگاہی حاصل ہوئی ہے۔

 2011-12ءمیں موسم ربیع کے دوران 1لاکھ 77ہزار 440اور موسم خریف میں75ہزار سبزیوں کے بیجوں کے پیکٹ تقسیم کئے گئے، جبکہ سال 2012-13ءمیں ربیع سیزن میں 1لاکھ 27ہزار 600اورموسم خریف میں 39ہزار پیکٹ کاشت کے لئے مہیا کئے گئے۔ منصوبے کی مقبولیت کے پیش نظر اس سال بھی سبزیوں کے بیجوں کے پیکٹ کی تقسیم کا ہدف 30ہزار سے بڑھا کر 1لاکھ کیاگیا ہے۔ منصوبے کی کامیابی کا اندازہ اس بات سے لگایا جا سکتا ہے کہ بیجوں کے پیکٹ کاشتکاروں کو فروخت کرنے کے بعد حاصل ہونے والی رقم حکومت کے خزانہ میں واپس جمع کروا دی جاتی ہے ،جس سے حکومت کو خاطرخواہ اخراجات برداشت نہیں کرنا پڑتے، جبکہ کاشتکاروں کو بھی پانچ مرلے پر آٹھ قسم کی سبزیوں کی کاشت کے لئے بیجوں کے پیکٹ 50روپے فی پیکٹ کی انتہائی کم قیمت پر دستیاب ہیں۔ اس منصوبے کا بنیادی مقصد کاشتکاروں اور شہروں میں بسنے والے افراد میں اپنی سبزی خود اگانے کا شعور اجاگر کرنا تھا ،جس میں یہ منصوبہ خاطر خواہ حد تک کامیاب رہا ہے۔

جدید دور میں سبزیوں کی اہمیت بطور غذا محتاج بیان نہیں۔ جدید طرز زندگی میں بہت سی بیماریوں، مثلاً ہائی بلڈ پریشر، امراض قلب اور کینسر جیسے مہلک امراض میں تیزی کے ساتھ اضافہ ہوگیا ہے۔ سبزیوں کے زیادہ استعمال سے ان بیماریوں کے خاتمے میں کامیابی حاصل کی جاسکتی ہے۔خوراک میں سبزیوں کا استعمال 300سے 350گرام فی کس روزانہ ہونا چاہیے، جبکہ ہمارے ہاں یہ مقدار 100سے 150گرام فی کس روزانہ ہے جو کہ سفارش کردہ مقدار سے آدھی سے بھی کم ہے ،جس کی وجہ سے ہمارے ہاں صحت عامہ کے مسائل میں اضافہ ہوا ہے۔نوجوان نسل بھی دل کی بیماریوں میں مبتلا ہو رہی ہے۔ اس کے علاوہ سبزیوں کی کاشت فن ِباغبانی کا ایک نہایت ہی اہم حصہ ہے ۔ اپنے کھیت یا گھر کے باغیچے میں کاشت کی ہوئی سبزیا ں تازہ، سستی ، سپرے اور دیگر غلاظتوں سے پاک ہوتی ہیں،لہٰذا ن کے کھانے سے انسانی صحت پر خوشگوار اثر پڑتا ہے ۔

کچن گارڈننگ بنیادی طور پر گھر کے کچن کی ضروریات ،گھریلو پیمانے پر پورا کرنے کی ایک کوشش کا نام ہے۔ اس پروگرام کی کامیابی میں گھریلو خواتین اہم کردار ادا کر سکتی ہیں۔ گھریلو خواتین کو تربیت فراہم کرنے کے لئے پڑھی لکھی اور خصوصی طور پر زرعی یونیورسٹیوں اور کالجوں میں خواتین طالبات آگے بڑھیں ۔ امید ہے کہ شہروں میں آباد لوگ گھریلو پیمانے پر سبزیاں کاشت کرنے کے اس منصوبہ کو کامیاب بنا کر نہ صرف گھریلو اخراجات کم کریں گے، بلکہ تازہ سبزیوں کے استعمال سے صحت مند اور خوشحال پنجاب کی تعمیر میں بھی اہم کردار ادا کریں گے۔    ٭

مزید :

کالم -