وزارت انفارمیشن ٹیکنالوجی کے ٹیلی کام سیکٹر رولز کو چیلنج کر دیا گیا

وزارت انفارمیشن ٹیکنالوجی کے ٹیلی کام سیکٹر رولز کو چیلنج کر دیا گیا

  

لاہور(نامہ نگار خصوصی )وزارت انفارمیشن ٹیکنالوجی کے ٹیلی کام سیکٹر رولز کو لاہور ہائیکورٹ میں چیلنج کر دیا گیاہے، جسٹس عائشہ اے ملک نے اس سلسلے میں دائرکلیم الیاس ایڈووکیٹ کی درخواست پر وزارت آئی ٹی اوروفاقی حکومت سے 3 ہفتوں میں جواب طلب کر لیاہے، درخواست گزار نے موقف اختیار کیا کہ ٹیلی کام سیکٹرز کے رولز وزارت آئی ٹی نے خود ہی بنا رکھے ہیں، وفاقی کابینہ نے ٹیلی کام سیکٹر کے رولز کی منظوری نہیں دی، سپریم کورٹ کے فیصلے کے مطابق وفاقی حکومت کا مطلب وفاقی کابینہ ہے لیکن وفاقی سیکرٹریز اپنی اپنی خواہشات کے مطابق قواعد و ضوابط بنا کر وزارتیں چلانے کی کوششوں میں مصروف ہیں، انہوں نے نشاندہی کی کہ ان رولز کی آڑ میں وزیر مملکت برائے انفارمیشن ٹیکنالوجی انوشہ رحمن نے ایک یو ایس ایف کمپنی بنا رکھی ہے اور اس کے اربوں روپے کے فنڈز اپنی مرضی سے منظور نظر ٹیلی کام سیکٹرز بانٹے جا رہے ہیں۔

مزید :

صفحہ آخر -