عدالت نے 4سالہ بچے کوماں کی تحویل میں دیدیا،بچہ باپ کے ساتھ جانے کے لئے روتا رہا

عدالت نے 4سالہ بچے کوماں کی تحویل میں دیدیا،بچہ باپ کے ساتھ جانے کے لئے روتا ...

  

لاہور(نامہ نگار خصوصی )لاہورہائیکورٹ کے مسٹر جسٹس راجہ شاہد محمود عباسی نے 4سالہ بچہ باپ سے لے کر ماں کی تحویل میں دے دیا، بچہ باپ کے ساتھ جانے کے لئے احاطہ عدالت میں روتا رہا۔4 سالہ بچے کی تحویل کے لئے اس کی ماں اقرا نے لاہور ہائیکورٹ سے رجوع کیا تھا۔ لاہور کی رہائشی اقراء نے عدالت کو بتایا کہ اس کے شوہر عبداللہ نے اسے مارپیٹ کر گھر سے نکال دیا اور 4 سالہ بچے نعمان کو بھی چھین لیا ہے۔اب اسے بچے سے ملنے بھی نہیں دیا جا رہا چنانچہ بیٹے کی تحویل اسے دی جائے۔ عدالت وکلاء کے دلائل سننے کے بعد بچہ ماں کے حوالے کرنے کا حکم دیالیکن بچے نے ماں کے ساتھ جانے سے انکار کر دیا اور باپ کے پاس جانے کے لئے روتا رہا۔

بچہ تحویل

مزید :

صفحہ آخر -