پنجاب یونیورسٹی سوشل ویلفیئر ڈیپارٹمنٹ کے سربراہ ڈاکٹر زاہد جاوید کی تعیناتی لاہور ہائیکورٹ میں چیلنج

پنجاب یونیورسٹی سوشل ویلفیئر ڈیپارٹمنٹ کے سربراہ ڈاکٹر زاہد جاوید کی ...
پنجاب یونیورسٹی سوشل ویلفیئر ڈیپارٹمنٹ کے سربراہ ڈاکٹر زاہد جاوید کی تعیناتی لاہور ہائیکورٹ میں چیلنج

  

لاہور(نامہ نگارخصوصی )پنجاب یونیورسٹی سوشل ویلفیئر ڈیپارٹمنٹ کے سربراہ ڈاکٹر زاہد جاوید کی تعیناتی لاہور ہائیکورٹ میں چیلنج کر دی گئی ہے۔یہ درخواست شہری منیر احمد نے اظہر صدیق ایڈووکیٹ کی وساطت سے دائر کی ہے جس میں موقف اختیار کیا گیا ہے کہ ڈاکٹر زاہد جاوید کو غیرقانونی طور پر ایسوسی ایٹ پروفیسر بنایا گیا جبکہ پی ایچ ڈی ڈگری کے لئے ان کے مقالہ جات بھی جعلی ہیں، ڈاکٹر زاہد نے معاملہ دبانے کے لئے وائس چانسلر پنجاب یونیورسٹی مجاہد کامران کو رشوت دی اور مجاہد کامران نے غیرقانونی طور پر ڈاکٹر زاہد کو سوشل ویلفیئر ڈیپارٹمنٹ کا سربراہ لگایا، درخواست میں کہا گیا ہے کہ سپریم کورٹ ڈاکٹر زاہد جاوید کی ایسوسی ایٹ پروفیسرشپ کو غلط قرار دے چکی ہے لیکن سپریم کورٹ کے فیصلے کے باوجود ڈاکٹر زاہد سوشل ویلفیئر ڈیپارٹمنٹ میں بطور سربراہ کام کر رہے ہیں، درخواست میں استدعا کی گئی ہے کہ پنجاب یونیورسٹی سوشل ویلفیئر ڈیپارٹمنٹ کے سربراہ ڈاکٹر زاہد جاوید کو عہدے ہٹایا جائے۔

مزید :

لاہور -