کروڑوں کی کرپشن ، اقربا پروری، وائس چانسلر کیخلاف شہر بھر میں بینرز آویزاں

کروڑوں کی کرپشن ، اقربا پروری، وائس چانسلر کیخلاف شہر بھر میں بینرز آویزاں

بہاولپور (ڈسٹرکٹ رپورٹر)اسلامیہ یونیورسٹی میں کروڑوں روپے کی کرپشن،اقراباء پروری اور دیگر بے ضابطگیوں پر وکلاء اور تاجروں نے وائس چانسلر ڈاکٹر قیصر مشتاق کو فوری طور پر برطرف کرنے کا مطالبہ کرتے ہوئے شہر کے مختلف مقامات پر بینرز آویزاں کر دئیے ہیں۔ہائیکورٹ، ڈسٹرکٹ بار (بقیہ نمبر43صفحہ12پر )

کے داخلی راستوں پر ینگ لائرز کی جانب سے جبکہ شہر کے مختلف تجارتی مراکز پر انجمن تاجران کی جانب سے آویزاں بینرز پر وزیراعظم پاکستان،چیف آف آرمی سٹاف اور گورنر پنجاب سے اسلامیہ یونیورسٹی کی تباہی کا نوٹس لینے اور وائس چانسلر ڈاکٹر قیصر مشتاق کوبرطرف کرکے غیر جانبدارنہ تحقیقات کروانے کا مطالبہ کیا گیاہے ۔بینرز پر تحریر گیا ہے کہ وی سی قیصر مشتاق کے خلاف غیر جانبدانہ ایکشن کب ہو گا۔میڈیا اور عوام نے کرپشن کے ثبوت دئیے مگر وی سی قیصر مشتاق کے خلاف کارروائی میں رکاوٹ کون ہے۔یاد رہے کہ وائس چانسلر ڈاکٹر قیصر مشتاق کا شمار مسلم لیگ(ن) کے بااعتماد افسران میں ہوتا اور ان کی آئندہ ماہ مدت تعیناتی پوری ہورہی ہے اور انہوں نے اپنی تعیناتی کے دوران اپنے دست راست خزانہ دار فخر بشیر سے ملی بھگت سے مبینہ طور پر لوٹ مار کی اور ان کی تعیناتی کے دوران کروڑوں روپے کی کرپشن،میرٹ کے برعکس سیاسی بنیادوں پر تقرریوں ، وزیراعظم لیپ ٹاپ کے سینکڑوں لیپ ٹاپ کی آتشزدگی، اقرباء پروری سمیت دیگر بے ضابطگیوں کے الزامات ہیں جبکہ وزیراعلی انکوائری ٹیم بھی کرپشن کی تصدیق کر چکی ہے تاہم وائس چانسلر اپنی تعیناتی کے دوران سینڈیکٹ کے اجلاس میں کلین چٹ لینے میں ناکام ہو چکے اور اب تحریک انصاف کی اعلیٰ شخصیات سے روابط قائم کر رہے ہیں ۔شہری ،سماجی حلقوں نے ارباب اختیار سے فوری طور پر اسلامیہ یونیورسٹی کے گذشتہ چار سال کے سپیشل آڈٹ کا مطالبہ کیا ہے۔

وائس چانسلر

مزید : ملتان صفحہ آخر