میاں چنوں:سٹینوگرافر پر مبینہ تشدد،عدالتی عملے کا کام چھوڑ کر احتجاج

میاں چنوں:سٹینوگرافر پر مبینہ تشدد،عدالتی عملے کا کام چھوڑ کر احتجاج

میاں چنوں (نمائندہ خصوصی )میاں چنوں میں سول جج کے ہاتھوں سٹینو گرافر پر مبینہ تشدد اور ناروا رویہ کے خلاف عدالتی عملہ نے کام چھوڑ کر احتجاج کیا ہے۔ایڈیشنل ڈسٹرکٹ اینڈ(بقیہ نمبر31صفحہ12پر )

سیشن ججز کے صلح کرانے پر عدالتی عملہ نے دوبارہ کام شروع کردیا ہے تفصیلات کے مطابق میاں چنوں میں سول جج درجہ اول حسن اقبال نے مبینہ طور پر اپنے اہلکار سٹینو گرافر عمران اشرف کو تھپڑوں سے تشدد کا نشانہ بنایا واقعہ کی اطلاع ملنے پر تمام عدالتی عملہ نے کام چھوڑ کر کچہری کے احاطہ میں احتجاج کرنا شروع کردیا اور انصاف نہ ملنے تک احتجاج جاری رکھنے کا اعلان کردیا بعد ازں ایڈیشنل ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج شاہد بشیر چوہدری اور مسرور انور نے ان کے مابین صلح کروادی اور عدالتی عملہ نے کام دوبارہ شروع کردیا ہے۔

احتجاج

مزید : ملتان صفحہ آخر