عمران خان کی نااہلی کیس، درخواست گزار کے وکیل سے معاونت طلب

عمران خان کی نااہلی کیس، درخواست گزار کے وکیل سے معاونت طلب

لاہور(نامہ نگارخصوصی)لاہورہائیکورٹ کے مسٹر جسٹس شاہد وحید پر مشتمل الیکشن ٹربیونل نے وزیر اعظم عمران خان کی نااہلی کے لئے دائر درخواست کے قابل سماعت ہونے کے معاملے پر درخواست گزار کے وکیل سے معاونت طلب کرلی ہے ،8نومبر کو فاضل ٹربیونل نے اس انتخابی عذرداری پر عمران خان کے وکیل کے اعتراضات کے بعد اپنا فیصلہ محفوظ کیا تھا ،فاضل ٹربیونل نے قراردیاہے کہ ان اعتراضات پر مخالف فریق کو شنوائی کا موقع دیاجاناضروری ہے ۔فاضل بنچ نے پی پی 78 سرگودھا سے تحریک انصاف کے ایم پی اے عنصر مجید ،این اے 89 سے مسلم لیگ (ن) کے ایم این اے محسن نواز رانجھا اورحلقہ این اے 90سے مسلم لیگ (ن) کے ایم این اے حامد حمید کی نااہلی کے لئے دائر انتخابی عذرداریوں کے قابل سماعت ہونے کی بابت بھی مدعاعلیہان سے دلائل طلب کرلئے ہیں۔عمران خان کے کیس کی سماعت 13نومبرجبکہ دیگر مقدمات کی سماعت 12نومبر کو ہوگی۔عمران خان کے خلاف حلقہ این اے 95میانوالی سے ان کے مدمقابل پاکستان جسٹس اینڈ ڈیموکریٹک پارٹی کے امید وار عبدالوہاب بلوچ نے انتخابی عذداری دائر کررکھی ہے ،جس میں عمران خان کے کاغذات نامزدگی پر اعتراضات اٹھائے گئے ہیں۔عمران خان کی طرف سے بابر اعوان ایڈووکیٹ نے موقف اختیا رکیا کہ انتخابی عذرداری مقررہ وقت کے بعد دائر کی گئی ،انتخابی عذرداری کا بیان حلفی لاہور کی بجائے اسلام آباد کے اوتھ کمشنر سے تصدیق کروایا گیا،درخواست گزار کراچی کا رہائشی ہے ،اس لئے لاہور ہائی کورٹ میں انتخابی عذرداری دائر نہیں کرسکتا،درخواست گزار نے انتخابی عذرداری کے ساتھ جھوٹا بیان حلفی دیا ہے ،اس لئے یہ انتخابی عذرداری ناقابل سماعت ہے ،اسے مسترد کیا جائے،درخواست گزار کے وکیل قاضی مبین نے دلائل دیتے ہوئے کہا کہ عمران خان نے اپنے کاغذات نامزدگی میں اپنے بچوں کے بارے میں تمام معلومات فراہم نہیں کیں، عمران خان نے الیکشن ایکٹ 2017 ء پر عمل درآمد نہیں کیا ،انہیں نااہل قراردیاجائے۔

حلقہ این اے 90 سے مسلم لیگ (ن) کے ایم این اے حامد حمید کے خلاف ان کی مدمقابل امیدوارنادیہ عزیز نے انتخابی عذرداری دائر کررکھی ہے جس میں کہا گیا ہے کہ انتخابات میں متعلقہ ریٹرننگ افسر کا کردار متنازع رہا ،دھاندلی سے حامد حمید کو فتح دلوائی گئی ،درخواست گزار کے متعدد ووٹوں کو بلاجواز مسترد کیا گیا، حامد حمید کی کامیابی کو کالعدم قراردے کر اس حلقہ میں دوبارہ الیکشن کا حکم دیا جائے۔حلقہ پی پی 78 سرگودھا سے تحریک انصاف کے ایم پی اے عنصر مجید کی نا اہلی کے لئے عمارہ رضوان گل جبکہ مسلم لیگ (ن ) کے این اے 89 سے ایم این اے محسن نواز رانجھا کی نااہلی کے لئے ان کے مدمقابل امیدوار اسامہ احمد میلہ نے انتخابی عذرداریاں دائر کررکھی ہیں۔مدعاعلیہان کی طرف سے ان کے قابل سماعت ہونے کی بابت مختلف اعتراضات داخل کئے گئے ہیں،جس پر فاضل ٹربیونل نے مدعاعلیہان سے جواب طلب کیاہے۔

معاونت طلب

مزید : علاقائی