70دنوں میں حکومتی پالیسیوں نے معیشت کا بھرکس نکال دیا، فضل الرحمن

70دنوں میں حکومتی پالیسیوں نے معیشت کا بھرکس نکال دیا، فضل الرحمن

تیمرگرہ (آن لائن)جے یو آئی کے مرکزی امیر مولانا فضل الر حمٰن نے کہا ہے کہ دھاند لی کی بنیاد پر قائم ہو نے والی حکومت کبھی تسلیم نہیں کیا ہے ،ستر دنوں میں ناکام پالیسیوں نے معیشت کا بھرکس نکال دیا ہے ،ایک کروڑ نوکریاں دینے کا اعلان کرنے والے آج دنیا بھر میں بھیک مانگنیپرمجبور ہیں ، آسیہ مسیح کی بریت کا فیصلہ حکومت اور عدلیہ پر بین الاقوامی دباؤکانتیجہ ہے ، عمران خان یہودیوں کو ایجنٹ اورپی ٹی آئی مغرب کا نمائندہ جماعت ہے ، دہشت گردی کے خلاف جنگ نہیں بلکہ مدارس کو ختم کرنے کے خلاف جنگ تھی ، ریاست اپنی ناکامی تسلیم کریں۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے چکدرہ جامعہ رحمانیہ میں علما ء کنونشن سے خطا ب کہی اجتماع سے جمعیت علماء اسلام کے صوبائی امیر مولانا گل نصیب خان ، مولانا راشد محمود ، مولانا فضل الغفور ،مولانا حسین سمیت کئی دیگر نے بھی خطاب کیا ۔انہوں نے کہا کہ اس سال جنوری میں یورپی یونین کا وفد آیا تھا جنہوں نے کہا تھا کہ اب ہماری امداد آسیہ کی رہائی سے مشروط ہوگی اسی لئے تو بیرونی دنیا فیصلے پر اطمینان کا اظہار کر رہی ہے۔ممتاز قادری کو بین الاقوامی دباؤ پر پھانسی اور آسیہ کو رہائی ملتی ہے، مدرسوں میں اصلاحات کے نام پر انہیں بدنام کرنے اور اپنا نصاب مسلط کرنے کی کوششیں کی جارہی ہے۔

فضل الرحمن

مزید : صفحہ اول