جعلی درخواست گزاروں کو ایک سال قید او جرمانہ کیا جائے : چیئر مین نیب

جعلی درخواست گزاروں کو ایک سال قید او جرمانہ کیا جائے : چیئر مین نیب

اسلام آباد(سٹاف رپورٹر ) قومی احتساب بیورو نیب نے فرضی اور جعلی درخواستوں کی حوصلہ شکنی کے لیے درخواست گزاروں کے خلاف کارروائی کرتے ہوئے انہیں سزا دینے کا فیصلہ کیا ہے اور کہا ہے کہ جعلی درخواست دینے والے کو ایک سال قید اور جرمانہ کیا جائے گا، نیب فیس نہیں کیس کی بنیاد پر کارروائی پر یقین رکھتا ہے، شکایات کو ثبوتوں کے ساتھ مد نظر رکھا جائے گا، 2 ماہ تک تحریری شکایات کی جانچ پڑتال کے بعد کارروائی کا آغاز کیا جائے گا۔تفصیلات کے مطابق قومی احتساب بیورو نے جعلی اور فرضی شکایات پر کارروائی کا فیصلہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ جھوٹ اور جعلی درخواستیں دینے والوں کو سزا اور جرمانہ کیا جائے گا۔چیئرمین نیب جسٹس (ر)جاوید اقبال نے کہا ہے کہ جعلی درخواست دینے والے کو ایک سال قید اور جرمانہ کیا جائے گا۔ شکایت کنندہ کو مکمل ثبوتوں کے ساتھ بیان حلفی جمع کروانا ہوگا۔ 2 ماہ تک تحریری شکایات کی جانچ پڑتال کے بعد کارروائی کا آغاز کیا جائے گا۔ شکایت کنندہ کی شکایت درست ثابت ہونے پر 4 ماہ کے اندر انکوائری کا عمل مکمل کیا جائے گا۔ نیب نے فیصلہ فرضی درخواستوں کی حوصلہ شکنی کے لیے کیا ہے۔

نیب

Back to Conversion Tool

مزید : صفحہ اول