سکول کے ہیڈماسٹر کے کمرے سے کئی دن تک آتی پراسرار آوازیں، بالآخر اساتذہ نے اندر جاکر دیکھا تو دنگ رہ گئے، کیا چیز ملی؟ کبھی سوچ بھی نہ سکتے تھے

سکول کے ہیڈماسٹر کے کمرے سے کئی دن تک آتی پراسرار آوازیں، بالآخر اساتذہ نے ...
سکول کے ہیڈماسٹر کے کمرے سے کئی دن تک آتی پراسرار آوازیں، بالآخر اساتذہ نے اندر جاکر دیکھا تو دنگ رہ گئے، کیا چیز ملی؟ کبھی سوچ بھی نہ سکتے تھے

  

بیجنگ(نیوز ڈیسک)ہمارے ہاں دیہاتی علاقوں میں یہ مسئلہ عام دیکھنے میں آتا ہے کہ سکول میں کسی وڈیرے نے اپنی بھینسیں باندھ لیں، یا اثرورسوخ رکھنے والی کسی شخصیت نے گودام بنا لیا۔ چین کے ایک ہیڈ ماسٹر نے بھی اپنے سکول میں ایسا ہی کام کر ڈلا، مگر ذرا ہائی ٹیک انداز میں۔

برطانوی نشریاتی ادارے کے مطابق لی ہوا نامی ہیڈماسٹر نے سکول کے ایک کمرے میں کرپٹو کرنسی مائننگ کی مشینیں نصب کررکھی تھیں۔ سکول میں کام کرنے والے ٹیچرز کا کہنا ہے کہ انہیں ایک کمرے سے کسی عجیب و غریب مشین کے چلنے کی آواز آتی تھی لیکن اس میں داخل ہونے کی کسی کو اجازت نہیں تھی۔

اب پتہ چلا ہے کہ ہیڈماسٹر نے خفیہ کمرے میں کرپٹو کرنسی ’ایتھیریم‘ کی مائننگ کے لئے مشینیں لگارکھی تھیں۔ اس سے پہلے سکول میں بجلی کی غیر معمولی کھپت کا معاملہ سامنے آیا تھا لیکن ہیڈماسٹر نے اس کی و جہ ائیرکنڈیشنر کے استعمال کو قرار دیتے ہوئے معاملہ دبادیا تھا۔

واضح رہے کہ کرپٹو کرنسی جیسا کہ ’بٹکوئن‘ یا ’ایتھیریم‘ کی مائننگ کے لئے خاص قسم کے انتہائی طاقتور کمپیوٹرز کو کرنسی نیٹ ورکس سے منسلک کیا جاتا ہے۔ ان طاقتور کمپیوٹرز کو مائننگ مشینیں کہا جاتا ہے۔ ان میں بہت طاقتور پروسیسر کام کرتے ہیں اور یہ بجلی بھی بہت زیادہ استعمال کرتے ہیں۔ مائننگ ٹرانزکشنز کے لئے کمپیوٹنگ پاور فراہم کرکے لوگ اس دھندے سے بھاری مقدار میں دولت کمالیتے ہیں اور یہی کچھ یہ ہیڈماسٹر کررہا تھا۔ اس نے 8 مشینیں انسٹال کررکھی تھیں جو تقریباً دو سال سے کام کررہی تھیں۔

مزید : ڈیلی بائیٹس /بین الاقوامی