رامپورہ گیٹ اور اشرف روڈ کے تاجروں کی چھاپوں کیخلاف شٹر ڈاؤن ہڑتال

رامپورہ گیٹ اور اشرف روڈ کے تاجروں کی چھاپوں کیخلاف شٹر ڈاؤن ہڑتال

  



پشاور(سٹی رپورٹر)پشاورکی ضلعی انتظامیہ کی جانب سے رامپورہ گیٹ میں آٹاڈیلروں کی دوکانوں پرچھاپے مارنے کیخلاف رامپورہ گیٹ مارکیٹ اوراشرف روڈکے تاجروں نے مکمل شٹرڈاؤن کیاجبکہ تاجروں نے آٹے کے کاروبارسے وابستہ تاجروں کیخلاف درج مقدمات کی واپسی تک شٹرڈاؤن جاری رکھنے کااعلان کیاہے لہذامرکزی تنظیم تاجران خیبرپختونخواکے صدرملک مہرالہیٰ اورشوکت خان نے بھی اشرف روڈکادورہ کیااورتاجروں کی شٹرڈاؤن کی مکمل حمایت کااعلان کرتے ہوئے ڈپٹی کمشنرسے تاجروں پرکاٹے گئے پرچے واپس لینے کامطالبہ کیا رامپورہ گیٹ  مارکیٹ کے صدرحاجی وحیدخان،جنرل سیکرٹری وصال خان اورنائب صدرتیمورخان کاکہناہے کہ گزشتہ روزاسسٹنٹ کمشنر اوردیگرضلعی انتظامیہ کے اہلکاروں نے رامپورہ گیٹ مارکیٹ میں آٹے کے دوکانداروں پرچھاپے مارے اورانہیں قیمت کاصحیح تعین نہ کرنے کی غرض سے گرفتارکیاجنہیں تاجرنمائندوں نے مذاکرات کے ذریعے معاملہ حل کردیاچنانچہ ضلعی انتظامیہ نے شام کے اوقات دوبارہ بنددوکانوں پرچھاپے مارے اور25آٹے کے تاجروں پربلاجوازمقدمات درج کیے گئے جنکی مذمت کرتے ہیں انہوں نے مزیدکہاکہ تاجرضلعی انتظامیہ کے ساتھ مکمل تعاون کرتے چلے آرہے ہیں لیکن ضلعی انتظامیہ پھربھی آئے روزچھاپے مارکربھاری جرمانے اورگرفتاریاں کرتی ہے جوکہ قابل افسوس ہے ادھرضلعی انتظامیہ اورہڑتالی تاجروں کے درمیان دن بھرمذاکرات کاسلسلہ جاری رہاتاہم انتظامیہ اورتاجرکے درمیان فی الحال مذاکرات ناکام رہے ہیں۔

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...