تباہ کن سپیل پر اللہ کا شکر ادا کرتا ہوں، رن اپ بھول جانا کوئی بڑی بات نہیں، کرکٹ میں ایسا ہو جاتا ہے: وہاب ریاض

تباہ کن سپیل پر اللہ کا شکر ادا کرتا ہوں، رن اپ بھول جانا کوئی بڑی بات نہیں، ...
تباہ کن سپیل پر اللہ کا شکر ادا کرتا ہوں، رن اپ بھول جانا کوئی بڑی بات نہیں، کرکٹ میں ایسا ہو جاتا ہے: وہاب ریاض

  

دبئی (ڈیلی پاکستان آن لائن) سری لنکا کیخلاف دوسرے ٹیسٹ میچ میں 5 بار رن اپ بھول جانے کے معاملے پر وہاب ریاض کا کہنا ہے کہ یہ کوئی اتنا بڑا مسئلہ نہیں ہے، کرکٹ کا حصہ ہے اور ایسا ہو جاتا ہے لیکن یہ ٹیم کی بہتری کیلئے ہی تھا کیونکہ میں کوئی نو بال نہیں کروانا چاہتا تھا۔

یہ بھی پڑھیں۔۔۔”ملک ریاض نے نئے چیئرمین نیب کی گارنٹی دی ہے کہ ۔۔۔“ سینئر صحافی نے تہلکہ خیز انکشاف کر دیا، کیا گارنٹی دی ہے؟ جان کر ہی عمران خان اور شیخ رشید کے پیروں تلے زمین نکل جائے گی

غیر ملکی خبر رساں ادارے بی بی سی سے گفتگو کے دوران وہاب ریاض سے سوال پوچھا گیا کہ ” جس تباہ کن سپیل کیلئے آپ مشہور ہیں وہ ہم نے دبئی میں پھر دیکھا ، بڑی جان لگائی آپ نے، کیا یہ بار بار رن اپ بھول جانے پر غصے کا نتیجہ تھا یا کچھ اور تھا؟“

وہاب ریاض نے مسکراتے ہوئے جواب دیا کہ ”نہیں ایسا کچھ نہیں تھا، یہ کرکٹ ہے اور اس میں ایسا ہو جاتا ہے، رن اپ بھول گیا تھا اور وہ بھی اس لئے کہ میرے قدم ذرا بڑے اٹھ رہے تھے اور اس وجہ سے نو بال کا مسئلہ ہوتا ہے تو میں یہ نہیں چاہتا تھا کہ نو بال کرواﺅں۔

جہاں تک تباہ کن سپیل کی بات ہے تو سب سے پہلے میں اللہ کا شکر ادا رتا ہوں۔ میں ماضی میں بھی ٹیسٹ میچوں میں اچھی کارکردگی دکھاتا آ رہا تھا اور اب دوبارہ کھیلنے کا موقع ملا تھا جبکہ ہم ایک میچ ہار بھی چکے ہیں اس لئے میں یہ سوچ کر آیا تھا کہ کچھ ایسا کروں کہ اپنی ٹیم کو اچھی پوزیشن میں لاﺅں اور میچ جتواﺅں، تو اللہ کا شکر ہے کہ ہو گیا۔“

وہاب ریاض سے پھر سوال کیا گیا کہ ”آپ نے ساڑھے سات منٹ میں اوور مکمل کیا تو جب ایک نہیں، دو نہیں بلکہ کئی بار ایسا ہوتا ہے تو باﺅلر بھی کہیں کھو جاتا ہے اور اس کی توجہ بٹ جاتی ہے تو اس وقت آپ کے دماغ میں کیا چل رہا تھا؟“

یہ بھی پڑھیں۔۔۔”یہ دیکھو کروڑوں لوگ احتجاج کر رہے ہیں“ کیپٹن (ر) صفدر کی گرفتاری کے بعد نیب کے باہر لی گئی ایسی تصویر سوشل میڈیا پر شیئر ہو گئی جو کسی چینل کو دکھانے کی ”جرات“ نہ ہو سکی، دیکھ کر آپ کی ہنسی نہیں بلکہ قہقہے ”چھوٹ“ جائیں گے

وہاب ریاض پھر مسکرائے اور جواب دیا کہ ”میں خود اپنے آپ پر ہنس رہا تھا کہ یہ کر کیا رہا ہوں، اور مجھے یہ کوئی اتنا بڑا مسئلہ نہیں لگا۔ یہ ٹیم کی بہتری کیلئے ہی تھا کیونکہ میں نہیں چاہتا تھا کہ میں کافی پیچھے سے گیند کر دوں یا نو بال کروا دوں، اور مجھے شاٹ لگ جائے لیکن یہ کھیل کا حصہ ہے اور کرکٹ میں ایسا ہوتا ہے۔ “

مزید :

کھیل -