5غیر قانونی ہاؤسنگ سکیموں کے سائٹ آفس سربمہر

5غیر قانونی ہاؤسنگ سکیموں کے سائٹ آفس سربمہر

  



لاہور (جنرل رپورٹر)لاہور رنگ روڈ اتھارٹی کارنگ روڈ کی سدرن لوپ تھری (ایس ایل 3) کے ڈیڑھ کلومیٹر رائٹ آف وے کو خالی کرانے کے لیے گرینڈ آپریشن درجنوں سٹرکچرز کو مسمار کردیا گیا۔اڈہ پلاٹ تا ملتان روڈ پر 8کلومیٹر کی ایس ایل تھری کی تعمیر کے بعد رنگ روڈ کی تکمیل ہو جائے گی۔ ایس ایل تھری کے لیے 6.5 کلومیٹر جگہ لاہور رنگ روڈ اتھارٹی کے پہلے ہی زیر ملکیت ہے جبکہ 1.5 کلومیٹر کے رائٹ آف وے پر نجی ہاؤسنگ سوسائٹی کاقبضہ تھا۔رنگ روڈ کا رائٹ آف وے90 میٹر اور اس کا رقبہ 500 کنال ہے۔ کمشنر لاہور ڈویڑن ڈاکٹر مجتبیٰ پراچہ نے کہا ہے کہ مسمار کیے جانے والے سٹرکچرز میں 77 گھر،چار کمرشل پلازے ، پارکس اور اینٹوں کے بھٹے شامل ہیں ۔ ڈی سی لاہور کیپٹن ر انوار الحق کا کہنا تھا کہ سرکاری محکموں کی جانب سے نشاندہی کی گئی جگہوں پر آپریشن کیا جا رہا ہے ، اربوں روپے مالیت کی سرکاری اراضی کو واگزار کرایا جائیگا۔گرینڈ آپریشن میں پولیس، سول ڈیفنس، رنگ روڈپولیس، ایل ڈی اے اور ضلعی انتظامیہ کے افسران و ملازمین شریک ہوئے ،آپریشن کی نگرانی کمشنر احمد مجتبی پراچہ، ڈپٹی کمشنر انوارالحق، ڈی آئی جی آپریشن،اسسٹنٹ کمشنر رائیونڈ عاصم سلیم اور دیگر انتظامی افسران نے کی۔

سدرن لوپ تھری

لاہور( جنرل رپورٹر)لاہور ڈویلپمنٹ اتھارٹی کی ڈائریکٹر جنرل آمنہ عمران خان کی ہدایت پر میٹروپولیٹن پلاننگ ونگ کے عملے نے لاہور میں بنائی جانے والی غیر قانونی رہائشی سکیموں کے خلاف کریک ڈاؤن شروع کر دیا ہے۔ایل ڈی اے کے عملے نے گزشتہ روز فیروزپور روڈ پر واقع پانچ رہائشی سکیموں کے سائٹ آفس سربمہر کر دیئے۔ ا ن سکیموں میں الفجر سٹی‘ شہزاد ہومز‘انجینئرز پارک‘ نیو کشمیر پارک اور مدنی گارڈن کے بالمقابل واقع لینڈ سب ڈویژن شامل ہیں۔ ڈائریکٹر جنرل ایل ڈی اے کی ہدایت پر غیر قانونی رہائشی سکیموں کے خلاف آپریشن مسلسل مہم کے طورپر جاری رکھاجائے گا اور بلا تفریق وامتیاز کیا جائے گا۔ایل ڈی اے نے شہریوں کو ہدایت کی ہے کہ کسی بھی پرائیویٹ رہائشی سکیم میں کوئی بھی پلاٹ خریدنے اور اپنا قیمتی سرمایہ لگانے سے پہلے اس رہائشی سکیم /لینڈ سب ڈویژن اور پلاٹ وغیرہ کی قانونی حیثیت کے بارے میں لاہور ڈویلپمنٹ اتھارٹی سے معلومات حاصل کر لیں ورنہ نقصان کی صورت میں ایل ڈی اے ذمہ دار نہ ہوگا۔لاہور ڈویلپمنٹ اتھارٹی کی ڈائریکٹر جنرل آمنہ عمران خان نے پرائیویٹ رہائشی سکیموں کے بارے میں شہریوں کی شکایات کا نوٹس لیتے ہوئے فوری طور پر میٹروپولیٹن پلاننگ میں معمول کا کام بند کرنے کے احکامات جاری کر دیئے۔ تمام قانونی ‘غیر قانونی اور زیر کاروائی سکیموں کی سٹاک ٹیکنگ کرنے کا حکم دے دیا۔ انہوں نے ہدایت کی کہ ان سکیموں کے کیسز کا فوری طور پر آڈٹ کیا جائے اور اس کے بعد ہی میٹروپولیٹن پلاننگ ونگ کا روزمرہ کام دوبارہ شروع کیا جائے۔

ڈی جی ایل ڈی اے

مزید : صفحہ آخر